فروری میں مار گرایا جانے والا ایرانی ڈرون حملے کیلئے تیار تھا، اسرائیل کا دعویٰ

16 اپریل 2018

تل ابیب (آئی این پی) اسرائیل نے دعویٰ کیا ہے کہ رواں سال فروری میں اس کی طرف سے مار گرائے جانے والا بغیر ہواباز کے ایرانی ڈرون طیارہ بارود سے لیس تھا اور یہ اسرائیل پر حملہ کرنے کے ایک مشن پر تھا ۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیل کی فوج نے جاری بیان میں کہا کہ ایرانی طیارہ بارود سے لیس تھا اور اسے اسرائیل کی سرزمین پر حملے کرنے کا کام سونپا گیا تھا۔فوج کا مزید کہنا ہے کہ اس نے یہ نتیجہ ڈرون کے واقعے سے متعلق انٹلی جنس معلومات کے بنا پر کی جانے والی تحقیقات سے اخذ کیا ہے۔