لوڈ شیڈنگ پراپیگنڈا کااثر زائل کرنے کیلئے ‘ بجلی کمپنیوں کا مرکز لیسکو میں بنا دیا

16 اپریل 2018

لاہور ( ندیم بسرا) حکومت نے اپنی مدت ختم ہونے سے قبل بجلی کی حالیہ بحران کے حوالے سے پراپیگنڈا کے اثر کو زائل کرنے کیلئے ملک کی بجلی کی تمام کمپنیوں کا مرکز لیسکو ہنڈا آفس بنا دیا جس کا مقصد مسلم لیگ (ن) کی اعلیٰ ترین قیادت اور حکومت کو تمام صورتحال سے آگاہ کرنا اور خصوصاً پنجاب کی گوجرانوالہ ‘ فیصل آباد ‘ راولپنڈی / اسلام آباد ‘ ملتان اورلاہور کی کمپنیوں کے سر براہ چیف ایگزیکٹوز کی فوری دستیابی بھی ہے۔ اس حوالے سے سیکرٹری پاور یوسف نسیم کی سر براہی میں ملک کی تمام تقسیم کار کمپنیوں کے چیف ایگزیکٹو ز کی منگل 17اپریل کو لیسکو ہیڈ آفس میں صبح ساڑھے دس بجے پہلی میٹنگ ہوگی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ گزشتہ ایک ماہ کے دوران بجلی کی لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ بڑھا جس پر اپوزیشن اور عوام نے شدید تنقید کی۔ جس کے بعد وزارت پاور کے سر براہ اویس لغاری نے نوٹس لیا اور تمام صورتحال کو مانیٹر کیا جانے لگا۔ حکومت اپنی مدت ختم کرنے کے قریب ہے اس کو دیکھتے ہوئے وزارت پاور میں فیصلہ کیا گیا کہ مسلم لیگ (ن) کی اعلیٰ قیادت کی تعلق لاہور سے ہے اور اس حقیقت سے جو بھی صورتحال بجلی کے نظام سے متعلق ہو اس کو دیکھتے ہوئے تمام تر فیصلے حکومت کی اعلیٰ شخصیات تک پہنچائیں جائیں۔ ملک کی تمام بڑی کمپنیوں میں سے پنجاب میں سب سے زیادہ 5تقسیم کار کمپنیاں ہیں ان میں لاہور ‘ گوجرانوالہ ‘ فیصل آباد ‘ راولپنڈی ‘ اسلام آباد اور ملتان الیکٹرک پاور کمپنی شامل ہے۔ لاہور لیسکو میں ہونیوالی میٹنگ کا مقصد آئندہ ہونیوالے الیکشن سے قبل پنجاب کی کمپنیوں میں کروائے جانے والے ترقیاتی کاموں کا جائزہ بھی لینا ہے۔ لیسکو میں تمام تیاریاں مکمل کرائی گئی ہیں اس میٹنگ میں سیکرٹری پاور کے علاوہ ایم ڈی پیسکو ‘ این ٹی ڈی سی ‘ نیشنل پاور کنٹرول سنٹرکے افسران سمیت اعلیٰ افسران شرکت کریں گے۔