;شہباز شریف جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائر نگ کے ذمہ دار ہیں‘ نثار کھوڑو

16 اپریل 2018

لاڑکانہ(این این آئی) پیپلز پارٹی سندھ کے صدر اور محکمہ خوراک کے سینیئر صوبائی وزیر خوراک نثار احمد کھوڑو نے کہا ہے کہ ش لیگ کے سربراہ شہباز شریف کی مت ماری گئی کہ اپنے بھائی کے پاناما کیس میں جج پر حملہ کرواکے نوازشریف کو عمر قید دلانا چاہتے ہیں، لاہور میں جسٹس اعجازالاحسن کے گھر پر فائرنگ کے واقعے کا شہباز شریف جوابدہ ہے۔ لاڑکانہ پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے نثار احمد کھوڑو کا مزید کہنا تھا کہ جج کے گھر پر پولیس گارڈز کے ہوتے ہوئے حملہ ہو تو سیدھا ذمہ دار شہبازشریف ہے۔ انہوں نے کہا کہ ن لیگ نے جرات نہیں دکھائی اور یہ کہتی ہے کہ نوازشریف ہی صدر رہے گا، چودھری نثار کی شہبازشریف کے ساتھ دوستی ہے شہبازشریف کی اگر الگ جماعت ہوگئی ہے تو شاید چودھری نثار شہبازشریف کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ 5 سالوں میں کرپشن کا بادشاہ نوازشریف ثابت ہوا ہے کوئی اور نہیں، پیپلز پارٹی کا وزیراعظم کرپشن پر نہیں توہین عدالت پر ہٹایا گیا، وزیراعظم کے پاس ریڈ پاسپورٹ ہوتا ہے جس کو ویزا لینے کی ضرورت نہیں ہوتی اس پاسپورٹ کے باوجود نوازشریف نے اقامہ کیوں لیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ شہباز شریف یہ بتائے کے مرسوں مرسوں سندھ نہ ڈیسوں کہا کس نے تھا، کالاباغ ڈیم بنانے والے شریف برادران آج مرسوں مرسوں سندھ نہ ڈیسوں کے نعرے پر طنز کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مشرف اور نوازشریف دونوں کی سوچ ایک ہے مشرف نے 10 سال گنوائے اور بھاشا ڈیم نہیں بنایا۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کا یکم اپریل سے نوکریوں اور ڈولپمنٹ اسکیموں پر پابندی کا فیصلہ کالا حکم ہے، الیکشن شیڈول کے بعد ڈولپمنٹ پر پابندی ہونی چاہیے، افسران کے تبادلوں پر بھی الیکشن شیڈول اعلان ہونے سے پابندی ہونی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ ڈسٹرنگ رٹرننگ افسر کے پاس پولنگ ایجنٹ کے لیے دروازے بند ہوتے ہیں کسی اور کے لیے دروازے کھلے ہوتے ہیں، ہم چاہتے ہیں پولنگ ایجنٹ کو تحفظ ہو انتخابات کے نتائج اسی وقت ویب سائیٹ پر آنے چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ میں نئے صوبے بنانے کی بات سازش کا حصہ ہے، پاکستان میں 22 صوبے بنانے کا مطالبہ سازشی منصوبے کا حصہ ہے جو ماضی سے چلتا آرہا ہے۔
نثار کھوڑو