ن لیگ اداروں کا احترام کرنا سیکھے‘ بہاولپور صوبہ بحال ہونا چاہئے‘ افتخار چودھری

16 اپریل 2018

بہاولپور (نامہ نگار) بہاولپورصوبہ بحال کیا جاناچاہیے جو عوام کاحق ہے بعض لوگوں نے ہمدردیاں حاصل کرنے کے لئے استعفیٰ دیاسپریم کورٹ نے اپنااختیار استعمال کرتے ہوئے 62 ون ایف کی تشریح کی ہے ن لیگ خواہ مخواہ کارونا بندکرے ان خیالات کااظہار سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے بہاولپورمیں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیاانہوں نے کہاکہ ہمارا بہاولپور آنے کا مقصد عوامی رابطہ مہم ہے ملک کے جو حالات ہیں اس کے متعلق لوگوں کی رائے کا سمجھنا ضروری ہے عوام سے گزارش ہے کہ ان لوگوں کو اپنا نمائندہ منتخب کریں جو ان کے رہبر ہوںانہوں نے کہاکہ مسلم لیگ ن، پیپلز پارٹی اور کچھ لوگ تحریک انصاف میں بھی ہیں جن کی وجہ سے سیاست سے لوگ دور بھاگتے ہیںعوام ووٹ سے ایسے لوگ منتخب کریں جو الیکشن کے بعد آپ سے ہاتھ ملائیں نہ کہ 5 سال کے لئے غائب ہو جائیںایلیٹ کلاس اپنے مفادات کے لیے اسمبلی میں جاتے ہیںہماری پارٹی پہلی مرتبہ الیکشن میں حصہ لے رہی ہے، کوشش ہے ایسے لوگوں کو لے آئیں جو عوامی ہوںجنوبی پنجاب محاذ کے نام پر سیاست کی جا رہی ہے، ان لوگوں نے لوگوں کی ہمدردیاں حاصل کرنے کے لیے استعفیٰ دیا ان سے پوچھا جائے کہ پانچ سال وہ کہاں تھے وہ صرف ووٹ لینے کا ایک طریقہ ہے انہوں نے کہاکہ صوبہ بہاولپور بحال کیا جانا چاہیے جو عوام کا حق ہے ن لیگ اداروں کا احترام کرنا سیکھے بہت سے فیصلے ن لیگ کے حق میں بھی آئے ہیں، سپریم کورٹ آف پاکستان نے اپنا اختیار استعمال کرتے ہوئے 62 ون ایف کی تشریح کی ہے ن لیگ والے خام خواہ کا رونا بند کریںسابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری رابطہ مہم کے لیے اوچشریف، احمد پور شرقیہ اور رحیم یار خان بھی جائیں گے۔
افتخار چودھری

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...