شہر کے 13بڑے نالوں سے یوٹیلیٹی لائنیں ہٹانے کا کام شروع

16 اپریل 2018

کراچی (اسٹاف رپورٹر) میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ کراچی کے 13 بڑے نالوں سے گزرنے والی یوٹیلیٹی لائنوں کو فوری ہٹانے کا کام شروع کیا جائے اور یوٹیلیٹی سروسز کے ادارے گزرنے والی اپنی لائنوں کو فوری ہٹانے کا انتظام کریں، نالوں کی صفائی کے کام کا آغاز کردیا گیا ہے اور کوشش کریں گے کہ برسات کے موسم سے پہلے ان نالوں کی صفائی کا کام مکمل کرلیا جائے، یہ بات میئر کراچی وسیم اختر نے کے ایم سی کے محکمہ میونسپل سروسز کو ہدایت دیتے ہوئے کہی، قبل ازیں ایک اجلاس منعقد ہوا جس میں کراچی کے 13 بڑے نالوں کی صفائی اور کراچی میں سیوریج لائنوں کی صورتحال اور اس سے پیدا ہونے والے مسائل پر غور کیا گیا، اجلاس میں میونسپل کمشنر ڈاکٹر اصغر عباس، سینئر ڈائریکٹر کوآرڈینیشن مسعود عالم، سینئر ڈائریکٹر میونسپل سروسز نعمان ارشد، ڈائریکٹر وہیکل فرید تاجک اور دیگر افسران نے شرکت کی۔ اجلاس میں ان احکامات کا بھی جائزہ لیا گیا جو عدالت عالیہ اور عدالت عظمیٰ نے نالوں کی صفائی سے متعلق دیئے ہیں، میئر کراچی نے کہا کہ ابتدائی طور پر 4 بڑے نالوں منظور کالونی نالہ، محمود آباد نالہ، چکور نالہ اور اورنگی ٹائون نالے کی صفائی کا کام شروع کیا گیا ہے ان نالوں کے ساتھ ساتھ پی ای سی ایچ ایس نالہ، سولجر بازار نالہ، پی آئی ڈی سی نالہ اور گجر نالے کی صفائی کا کام بھی شروع کردیا جائے گا، انہوں نے کہا کہ اگر یہ نالے بروقت صاف نہ کئے گئے تو برساتی پانی کی نکاسی میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا، میئر کراچی نے کہا کہ گزشتہ سال برساتی پانی کے باعث شہریوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا تھا اور بارش کے بعد متعدد سڑکیں زیر آب آگئی تھیں۔