بجٹ پیش نہیں کرینگے الیکشن کمیشن کی ترقیاتی کاموں پر پابندی غیر آئینی ہے : پرویز خٹک

16 اپریل 2018

پشاور(بیورورپورٹ)وزےراعلیٰ خےبر پختونخوا پروےز خٹک نے کہا ہے کہ پاکستان تحرےک انصاف کی مرکزی قےادت نے فےصلہ کےا ہے کہ وہ آئندہ مالی سال کے لئے بجٹ پےش نہےں کرےنگے، الےکشن کے بعد جو بھی حکومت آئے گی وہی بجٹ پےش کرے گی ،الےکشن کمےشن کا ترقےاتی کاموں پر پابندی غےر آئےنی ہے،جب تک انتخابات کے شےڈول کا اعلان نہےںکیا جاتا ان کے پاس ترقےاتی کام روکنے کا کوئی آئےنی اختےار نہےں ہے ،سینیٹ انتخابات مےں ووٹ بےچنے والوں کی حتمی لسٹ تےار کرلی گئی ہے جس مےں 14 ارکان شامل ہےں اوران ممبران کے خلاف بھر پور کاروائی کی جائے گی جس مےں کچھ کارروائی سے قبل پارٹی چھوڑ کر بھاگ گئے ،پاکستان تحرےک انصاف نے جنوبی اضلاع مےں جمعےت علماءاسلام(ف) کوٹف ٹائم دےنے کے لئے آئندہ انتخابات مےں سےف اللہ برادران سے اتحاد کا اعلان کےا جس مےں ضلع لکی مےں سلےم سےف اللہ خان آزاد حےثےت سے پاکستان تحرےک انصاف کی حماےت پر امےدوار ہوںگے ۔ان خےا لات کا اظہار انہوں نے اتوار کے روز وزےر اعلیٰ ہاﺅس پشاور مےں شمولےتی پروگرام مےں سلےم سےف اللہ خان کے ساتھ مشترکہ پرےس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔ وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ خےبر پختونخوا حکومت کے مرکزی شہر پشاور مےں رپےڈ بس ٹرانزٹ منصوبہ جو دنےا کا فاسٹ منصوبہ ہے کو حکومت ختم ہونے سے قبل ہی مکمل کےا جائےگا ،آئندہ انتخابات مےں جنوبی اضلاع مےں پاکستان تحرےک انصا ف سےف اللہ برادران کو آزاد حےثےت مےں سپورٹ کرے گی ،انہوں نے کہا اگر وفاقی حکومت آئندہ سال کے لئے بجٹ پےش بھی کرے مگر خےبر پختونخوا حکومت آئندہ سال کے لئے صوبائی بجٹ پےش نہےں کرے گی، بجٹ آئندہ حکومت کا حق ہے کہ وہ اپنے لئے خود بجٹ تےار کرےں اور پےش کرے ،انہوں نے کہا کہ پاکستان تحرےک انصاف نے آئندہ انتخابات مےں ٹکٹوں کی تقسےم کے لئے پارلےمانی بورڈ تشکےل دےا ہے اس وقت پارٹی کو ٹکٹ کے حصول کے لئے ہزاروں درخواستےں موصول ہوچکی ہے ٹکٹ کا فےصلہ بھی پارلےمانی بورڈ ہی کرےگا ۔اس مو قع پر سلےم سےف اللہ خان نے کہا کہ جنوبی اضلاع مےں سب سے زےادہ اکثرےت جمعےت علماءاسلام (ف) کی ہے جس کی وجہ سے وہ ہمےشہ کامےاب ہوتا ہے مگر انہوں جنوبی اضلاع کی ترقی کے لئے کوئی کام نہےں کےا اس وقت ملک مےں پاک چائنہ اقتصادی راہداری منصو بے مےں جنوبی اضلاع کے لئے کوئی کام نہےں کےا جبکہ کرم تنگی ڈےم کو بنانے مےں بھی مولانا فضل الرحمن نے تحفظات کا اظہار کےا جہاں سے انکو ووٹ ملتا ہے وہاں کے ترقی پر سب سے پہلے مخالفت کرتاہے ،آئندہ انتخابات مےں سےف اللہ براداران پاکستان تحرےک انصاف کے ساتھ مل کر آزاد حےثےت سے الےکشن مےں حصہ لےنگے ،انہوں نے کہا کہ اس سے قبل بھی ہم نے جنوبی اضلاع کی ترقی کے لئے قربانےاں دی 2013 کے جنرل الےکشن مےں 60 ہزار ووٹ لےکر دوسرے نمبر پرآنے کے باوجود ضمنی انتخابات مےں ہم نے پاکستان تحرےک انصاف کے امےدوار کو سپورٹ کےا جس کی وجہ سے وہ کامےاب ہوگئے اس کے بعد بلدےاتی انتخابات مےں بھی اتحا د مےں ہم نے جمعےت کو شکست دےا اور آئندہ انتخابات مےں بھی شکست دےنگے ۔اس موقع پر سابق سول جج شےر افضل ،سابق ضلعی ناظم لکی اشفاق خان ،امےن جان ،صلاح الدےن اور ہشام خان نے مختلف پارٹےوں سے مستعفی ہوکر پاکستان تحرےک انصاف مےں شمولےت اختےار کےا ۔
پروےز خٹک