ملک کو صاحبزادہ فضل کریم جیسے دیانتدار رہنمائوں کی ضرورت ہے: علماء

16 اپریل 2018

لاہور (خصوصی نامہ نگار)سنی اتحاد کونسل کے بانی صاحبزادہ حاجی محمد فضل کریم کی برسی ملک بھر میں عقیدت و احترام کے ساتھ منائی گئی۔ اس سلسلہ میں چاروں صوبوں، آذاد کشمیر اور گلگت بلتستان میں صاحبزادہ فضل کریم کی یاد میں اجتماعات کا انعقاد کیا گیا اور مساجد و مدارس میں قرآن خوانی کا اہتمام کیا گیا۔ برسی کا مرکزی پروگرام جامعہ رضویہ میں ہوا جس سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین سنی اتحاد کونسل صاحبزادہ حامد رضا نے کہا کہ صاحبزادہ فضل کریم زندگی بھر طالبانائزیشن کی مزاحمت کرتے رہے۔ وہ حریت فکر کے مجاہد تھے۔ ہم صاحبزادہ فضل کریم کا مشن جاری رکھیں گے۔ المرکز الاسلامی شادباغ لاہور میں مفتی محمد حسیب قادری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج پاکستان کو صاحبزادہ فضل کریم جیسے دلیر اور دیانتدار راہنماؤں کی ضرورت ہے۔ صاحبزادہ فضل کریم مرتے دم تک انقلاب نظام مصطفیٰؐ کے لئے جرات مندانہ جدوجہد کرتے رہے۔ سید جواد الحسن کاظمی نے صاحبزادہ فضل کریم کی دینی اور قومی خدمات تاریخ کا روشن باب ہے۔ صاحبزادہ فضل کریم کی برسی کے موقع پر صاحبزادہ حسن رضا، ملک بخش الہی، مفتی فضل جمیل رضوی، مولانا فیض بخش رضوی، مولانا محمد اکبر نقشبندی، علامہ ارشد مصطفائی، صاحبزادہ مطلوب رضا، طارق ولی چشتی، میاں فہیم اختر، مفتی کریم خان، مفتی وسیم رضا نے اجتماعات سے خطاب کیا۔