پنجاب، بلوچستان، خیبر پی کے فاٹا میں انسداد پولیو مہم شروع، 2 کروڑ بچوں کو قطرے پلائے جائینگے

15 ستمبر 2015
پنجاب، بلوچستان، خیبر پی کے فاٹا میں انسداد پولیو مہم شروع، 2 کروڑ بچوں کو قطرے پلائے جائینگے

لاہور/قصور/کوئٹہ/پشاور(نیوزرپورٹر+ نمائندہ خصوصی+این این آئی) پنجاب، بلوچستان ، خیبر پی کے اور فاٹا کے تمام علاقوں میں انسداد پولیو مہم شروع ہو گئی ٗ مہم کے دوران2 کروڑ سے زائد بچوں کو پولیو سے بچائو کے قطرے پلانے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے۔ سخت سکیورٹی انتظامات میں پنجاب کے 180 لاکھ بچوں کو قطرے پلائے جائینگے۔ کوئٹہ سمیت بلوچستان کے 32 اضلاع میں تین روزہ انسداد پولیو مہم کے تحت 4 لاکھ 72 ہزار سے زائد پانچ سال تک کی عمر کے بچوں کی ویکسی نیشن کی جائیگی جس کیلئے 6 ہزار 400 سے زائد ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں، صوبے کی 61 یونین کونسلوں کو ہائی رسک قرار دیا گیا ہے،خیبر پی کے کے 25 اضلاع میں بھی تین روزہ انسداد پولیو مہم شروع کی گئی ہے، جہاں 54 لاکھ 22 ہزار سے زائد بچوں کو پولیو سے بچائو کے قطرے پلائے۔ 17 ہزار 135 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں، فاٹا مہم کے دوران 8 لاکھ 35 ہزار بچوں کو پولیو سے بچائو کے قطرے پلائے جائیں گے، مہم کیلئے 3 ہزار سے زائد رضا کار ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں سکیورٹی خدشات کے باعث انسداد پولیو مہم کے دوران ہزاروں اہلکار فرائض انجام دینگے۔ دوسری جانب کوئٹہ شہر میں تین روز کیلئے دفعہ ایک سو چوالیس نافذ کردی گئی ہے۔موٹر سائیکل کی ڈبل سواری،اسلحے کی نمائش اور عوامی اجتماع پر پابندی رہے گی۔ تاہم سکیورٹی اداروں کے اہلکار، بچے،خواتین،طلباء اور بزرگ حضرات پابندی سے مستثنیٰ ہوں گے۔ اسلحہ کی نمائش اور عوامی اجتماعات پر بھی پابندی عائد رہے گی۔ ڈی سی او عدنان ارشد اولکھ نے ڈی ایچ کیو ہسپتال میں بچوں کو قطرے پلا کر تین روزہ پولیو مہم کا افتتاح کر دیا۔ انہوں نے کہا کہ ضلع بھر میں پانچ سال سے کم عمر 5 لاکھ 42 ہزار 736 بچوں کو پولیو کے قطرے پلائے جائینگے۔