تتلے عالی، اوکاڑہ فیروز والا:3 خواتین، میاں چنوں میں 4 سالہ بچی سے زیادتی

15 ستمبر 2015

تتلے عالی + فیروزوالا +میاں چنوں+ اوکاڑہ (نامہ نگاران) تتلے عالی، اوکاڑہ، فیروز والا میں 3 خواتین، میاں چنوں میں 4 سالہ بچی سے زیادتی کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق نواحی گاؤں سادھوگورائیہ کے محنت کش ندیم کی عدم موجودگی میں اس کی بیوی (ع) بی بی جو 6 ماہ کی حاملہ بتائی جاتی ہے گاؤں کا علی رضا سانپ کاٹنے کا دم کرنے کے بہانے اپنے چچا کے گھر لے گیا پہلے سے موجود ذیشان، مون، عرفان سمیت اسلحہ کے زور پر (ع) کو اسلحہ کے زور پر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔میاں چنوں کے نواحی علاقہ موضع جراحی میں پندرہ سالہ اوباش شاہین اپنے ہی پڑوسیوں کی چار سالہ بچی نشین سے زیادتی کر ڈالی ۔اوکاڑہ میں حویلی لکھا کے عابد کی جواں سالہ بیٹی (ر) گھر میں اکیلی تھی ملزم احمد یار نے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ رچنا ٹاؤن میں 2 افراد نے لڑکی سے زیادتی کی۔ نوجوان یاسین نے اپنے ساتھی کی مدد سے کوٹ عبدالمالک کے عارف کی جواں سالہ بیٹی (ک) کو ملازمت دلانے کا جھانسہ دے کر رچنا ٹاؤن میں لے آئے جہاں پر ملزمان نے (ک) کے ساتھ اجتماعی زیادتی کی۔ مغویہ کو بے ہوشی کی حالت میں ویران مکان میں چھوڑ کر فرار ہوگئے۔لاہور سے خصوصی رپورٹر کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے ظفر وال میں بچوں کے ساتھ زیادتی اور ویڈیو بنانے کی خبر کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی پی او نارووال سے رپورٹ طلب کرلی ہے اور واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیا ہے۔