لاہور سٹاک مارکیٹ میں مندہ   70 ارب سے زائد ڈوب گئے

15 ستمبر 2015

کراچی+لاہور (مارکیٹ رپورٹر+ کامرس رپورٹر) اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے شرح سود میں کمی کے باوجود کراچی اسٹاک ایکس چینج میں کاروباری ہفتے کے پہلے روز اتارچڑھاو¿ کے بعد مندی رہی اور کے ایس ای 100انڈیکس 33600,33500اور 33400کی نفسیاتی حدوں سے بیک وقت گرگیا ۔سرمایہ کاری مالیت میں70ارب76کروڑ روپے سے زائد کی کمی ۔مارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای 100 انڈیکس287.99 پوائنٹس کمی سے33384.73 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مجموعی طور پر353 کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا ۔ سرمایہ کاری مالیت میں70 ارب76کروڑ98لاکھ 7ہزار 910 روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت گھٹ کر71 کھرب77 ارب16کروڑ58 لاکھ99 ہزار187 روپے ہوگئی۔ مجموعی طور پر13 کروڑ36 لاکھ18ہزار780 شیئرز کا کاروبار ہوا جوجمعہ کے مقابلے میں1 کروڑ81لاکھ770 شیئرزکم ہےں۔ لاہور سٹاک ایکسچینج میں سوموار کے روزتیز ی کا رجحان رہا - مجموعی طور پر56کمپنیوں کے حصص میں کاروبار ہوا۔ ایل ایس ای 25 انڈیکس 56.88پوائنٹس کے اضافہ کے ساتھ 5729.26 پر بندہو ا۔ مارکیٹ میں کل9 لاکھ55 ہزار 500 حصص کا کاروبارہو ا۔ جبکہ گزشتہ روز33لاکھ57 ہزارحصص کا لین دین ہوا۔