امریکی سکولوں میں فائرنگ کیخلاف طلبا کے ملک گیر مظاہرے

15 مارچ 2018

واشنگٹن(نیٹ نیوز)امریکہ بھر میں ہزاروں طالب علموں اوراساتذہ نے تعلیمی اداروں میں فائرنگ کے واقعات کے خلاف مظاہروں میں شرکت کی۔ منتظمین کا کہنا ہے کہ ان مظاہروں کا مقصد سکولوں میں بڑھتے ہوئے ہلاکت خیز تشدد کیخلاف کانگریس کی سست روی پر آواز اٹھانا ہے۔ یہ مظاہرہ ہر جگہ وہاں کے مقامی وقت کے مطابق صبح 10 بجے شروع ہوا ، اور 17 منٹ تک جاری رہا 17 کے ہندسے کا انتخاب اس لیے کیا گیا تھا کیونکہ ریاست فلوریڈا کے شہر پارک لینڈ میں واقع میر جوری سٹون مین ڈگلس ہائی سکول میں ویلنٹائن ڈے پر ایک شخص نے فائرنگ کرکے 17 افراد کو ہلاک کر دیا تھا۔ منتظمین کاکہنا ہے کہ امریکہ بھر اور دنیا کے کئی علاقوں میں ایسے تقریبا تین ہزار مظاہرے ہو رہے ہیں۔ واشنگٹن میں طالب علموں نے ٹرمپ کی رہائش گاہ وائٹ ہائوس کے سامنے 17 منٹ تک مظاہرہ کیا اور اسلحے پر کنٹرول سے متعلق پالیسیاں بنانے پر زور دیا۔ بدھ کے روز مظاہرہ ان کئی مظاہروں میں سے ایک ہے جو آئندہ ہفتوں کے لئے ترتیب دئیے گئے ہیں۔