یلو لائن بس منصوبے کیلئے عالمی بینک کی پیشکش مسترد

15 مارچ 2018

کراچی (وقائع نگار) حکومت سندھ نے24 کلو میٹر طویل یلو لائنز بس منصوبے پر ورلڈ بینک کی فنڈنگ کی پیشکش قبول کرنے سے معذرتک کرلی اور اس منصوبے پر قرضہ حاصل کرنے اور کام شروع کرنے کا معاملہ2018 ءکے عام انتخابات کے بعد آنے والی حکومت کی صوابدید پر چھوڑ دیا ہے۔ سرکاری ذرائع کے مطابق ورلڈ بینک نے حکومت سندھ کو قائد آباد سے براستہ کورنگی انڈسٹریل ایریا‘ ڈیفنس‘ کورنگی روڈ‘ شارع فیصل‘ شاہراہ قائدین سے نمائش چورنگی تک یلو لائنز بس منصوبے کیلئے نرم شرائط پر قرضے کی صورت میں فنڈنگ کی پیشکش کی جسے صوبائی حکومت نے خوبصورتی سے ٹال دیا ہے اور کہا ہے کہ فی الحال صوبائی حکومت شہر کراچی میں جاری منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھنا چاہتی ہے۔ مزید منصوبوں پر فنڈنگ کے فیصلے عام انتخابات کے بعد آنے والی حکومت کرے گی۔ ذرائع کے مطابق ورلڈ بینک مذکورہ منصوبے کے لئے300 سے500 ملین ڈالرز کی فنڈنگ کی پیشکش کرچکا ہے۔
یلو لائن بس

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...