پیپلز پارٹی نے ڈپٹی چیئرمین سینٹ کا عہدہ لے لیا‘ اپوزیشن لیڈر ہمارا ہونا چاہیے : عمران

15 مارچ 2018

کھیوڑہ+ جہلم (نامہ نگار+ نوائے وقت رپورٹ) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے پنڈدادن خان اور کھیوڑہ میں جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسمبلےوں مےں بےٹھے ہوئے نمائندوں کی زےادہ تعداد چور ڈاکوﺅں اور لٹیروں کی ہے، مسلم لیگ ن کے رہنماﺅں کو جوتے اس لئے پڑ رہے ہیں کیونکہ انہوں نے ختم نبوت کے قانون میں ترمیم کی کوشش کی ہے، پاکستان تحریک انصاف ملک میں ایسا نظام لائے گی جس سے ہر ایک کو انصاف ملے گا اور نوجوانوں کو روشن مستقبل ملے گا، ووٹ کا صحیح استعمال کر کے نیا پاکستان بنانا ہے۔ عمران خان نے تحصیل پنڈدادنخان کا دورہ کیا اور تحصیل میں مختلف مقامات پر عوام سے مختصر خطاب کیا۔ عمران خان بذریعہ روڈ لِلہ انٹرچینج پہنچے جہاں پر پی ٹی آئی کے کارکنوں نے استقبال کیا۔ مختصر خطاب کے بعد پنڈدادنخان اور کھیوڑہ میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہو ئے عمران خان نے کہا کہ اگر جلسہ میں موجود کوئی ن لیگی مجھے بھی جوتا مارنا چاہتا ہے تو وہ کوشش کر لے میرا کیچ بھی اچھا ہے اور تھرو بھی بہت اچھی ہے۔ عمران خان نے کہا کہ 2018کے الیکشن میں پاکستان تحریک انصاف کو کا میاب بنانے کے لیے آج سے ہی تیاری شروع کر دیں۔ ےورپی ممالک کے معاشروں مےں انصاف ہوتا ہے لےکن جب ہمارے ملک مےں منی لانڈرنگ کی وجہ سے نواز شرےف کا نکالا تو وہ شور کر رہا ہے کہ مجھے کیوں نکالا؟ دوسری طرف ضلع جہلم میں پاکستان تحریک انصاف کے اندرونی اختلافات تیزی سے بڑھ رہے ہیں جس کی وجہ سے تحریک انصاف کے کارکن لوگوں کی بڑی تعداد اکٹھی نہ کر پائے جو کہ 2018کے الیکشن میں تحریک انصاف کے لیے خطرے کی گھنٹی ہے۔ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کہتے ہیں کہ نواز شریف کے بعد اب شہباز شریف کی باری ہے، نواز شریف اور آصف زرداری سے ذاتی جنگ نہیں۔ نواز شریف اور زرداری قوم کا پیسہ چوری کر کے باہر لے جاتے ہیں، ہماری جنگ کرپٹ ٹولے سے ہے جب تک زندہ ہوں جنگ لڑتا رہوں گا، 2018ء میں یہ جنگ جیت کر دکھائیں گے۔ عمران خان نے جہلم میں رکنیت سازی مہم کے سلسلے میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 9 سال پہلے ہر پاکستانی پر 35 ہزار روپے قرضہ تھا آج ہر پاکستانی ایک لاکھ 30 ہزار روپے کا مقروض ہے۔ بچوں کو روشن مستقبل تب ملے گا جب انہیں اچھی تعلیم اور خوراک دیں گے جو پاکستان ہم چاہتے ہیں اس میں عام گھرانے سے بچہ سرکاری سکول سے پڑھ کر بڑے عہدے پر پہنچ سکے گا۔ پاکستان میں ایک چھوٹا طبقہ امیر ہو رہا ہے۔ جب قوم کا پیسہ چوری ہو کر باہر جاتا ہے تو پانی اور روزگار نہیں ملتا۔ جہلم میں عمران خان کے خطاب کے فوری بعد پی ٹی آئی کے کارکنان آپس میں لڑ پڑے۔
عمران