عربی زبان کا فروغ ایک آئینی ذمہ داری ہے، بیگم شاہینہ عباسی

15 فروری 2018

اسلام آباد(نا مہ نگار) بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کے خواتین کیمپس میں فیکلٹی آف عربی کی کاوشوں سے قائم کیے گئے ریسورس سنٹر برائے عربی زبان کا افتتاح کر دیا گیا جس کا افتتاح چیف آف نیول سٹاف کی اہلیہ بیگم شاہینہ عباسی نے کیا اور اس مرکز کے لیے ایک لاکھ روپے کا بھی اعلان کیا۔ اس موقع پر ر یکٹر بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی ڈاکٹر معصوم یٰسین زئی بھی موجود تھے جو کہ اس افتتاحی تقریب کے مہمان اعزازی تھے۔ اس ریسورس سنٹر میں طالبات کو تجوید، عربی، قرات ، تخلیقی عربی صلاحیت کی تربیت آڈیو ویڈیو کلاسز میں دی جائے گی۔ اپنے صدارتی خبطے میں بیگم شاہینہ عباسی نے کہا کہ عربی زبان کا فروغ ایک آئینی ذمہ داری بھی ہے پاک بحریہ کے تمام سکولز میں آٹھویں جماعت تک عربی تعلیم کو لازمی قرار دے دیا گیا ہے اور بحری فوج کے تمام رہائشی علاقوں میں قرآن سنٹرز قائم کیے جا رہے ہیں۔ اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے ڈاکٹر معصوم یٰسین زئی نے کہاعربی زبان مسلم امت کی میراث کی امین ہے اور ہمارے آقا ؐ اور قرآن کی زبان ہے جس کی وجہ سے اس سے محبت ایک فطری بات ہے ۔ ریکٹر جامعہ کاکہنا تھا کہ اسلامی یونیورسٹی اسلام کے پیغام امن کو عام کرنے کے لیے کوشاں ہے اور ضرورت مند طلباء اور غریب ممالک کے طلباء کو وظائف کے ذریعے تعلیم کا کام بھی جاری رکھے ہوئے ہے ۔ تقریب سے ڈاکٹر عالیہ اکرم ، چیئرپرسن شعبہ عربی نے بھی خطاب کیا، اور ریسورس سنٹر کے اغراض و مقاصد پر روشنی ڈالی اور عربی زبان کی اہمیت کو اجاگر کیا۔