نوازشریف فیملی کو سزا کے بعد مسلم لیگ (ن) کا حال متحدہ والا ہوگا: فواد چودھری

15 فروری 2018

لاہور (سپیشل رپورٹر) تحریک انصاف کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات فواد چوہدری نے کہا نیب نے نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن صفدر کو ای سی ایل میں ڈالنے کا خط لکھ دیا ہے۔ ماضی میں نیب پر ہماری بڑی تنقید رہی ہے، جسٹس جاوید اقبال نے جیسے کام کیا ان کو مبارکباد پیش کرتے ہیں۔ اداروں نے کام کی جھلک دکھائی، پہلے سپریم کورٹ نے ملک کے طاقت ور ترین مافیا کو پکڑا اور وزیر اعظم کو کرپشن پر باہر کیا گیا، پورا لاہور کھودا ہوا ہے، چار ارب ڈالر خرچ کرنے کے باوجود حالات خراب ہیں۔ ان خیالات کا اظہار فواد چوہدری نے چیئرمین سیکرٹریٹ گارڈن ٹائون میں میاں اسلم اقبال، عمر سرفراز چیمہ، رانا ندیم، عائشہ چوہدری کے ساتھ پریس کانفرنس میں کیا۔ افواد چوہدری نے کہا پاکستان کا بنیادی مسئلہ کرپشن ہے۔ چیئرمین نیب نے آکراحتساب کے عمل کو تبدیل کرکے رکھ دیا۔ نیب جوکام کررہا ہے، وہ قابل تعریف ہے لیکن نیب کی طرف سے صرف خط لکھنا کافی نہیں، فیصلے پر عملدرآمد بھی کرایا جائے اس سے پہلے بھی نیب نے اسحاق ڈار کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کیلئے خط لکھا تھا لیکن اس پر بھی عمل درآمد نہیں کرایا گیا بلکہ وزیراعظم کے طیارے میں اسحاق ڈار کو فرار کرایا گیا جنہوں نے ملزم اسحاق ڈار کو فرار کرایا، جرم میں برابر کے شریک ہیں، وزیرِ داخلہ اور سیکرٹری داخلہ کو اسحاق ڈار کا نام ای سی ایل میں نہ ڈالنے اور انہیں فرار کرانے پرحراست میں لیا جائے۔ پنجاب ہاؤس سے ملزم سرکاری پروٹوکول میں عدالت میں پیش ہورہے ہیںمسلم لیگ (ن) علی بابا چالیس چوروں کا گروہ ہے، چالیس چوروں کو ان کا حصہ ملتا ہے۔وزیرریلوے نے ہاؤسنگ سکیمیں بناکر لوگوں کو لوٹا انہوںنے کہاکہ پاکستان کا بنیاد ی مسئلہ کرپشن ہے، گلی ٹھیک کرانی ہو، میٹرلگوانا ہو، تو بھی رشوت دینا پڑتی ہے اتنا سارا پیسہ لگانے کے باوجودبھی لاہورشہرقابل سفرنہیں۔ سپریم کورٹ نے اسی لیے ان کو مافیا کہا تھا حکومت اپنے ایم این ایز کو 94 ارب بانٹ چکی الیکشن 2018کیلئے رائے ونڈ میں خصوصی سیل قائم کرکے اپنے افسروں کی لسٹیں تیار کی جارہی ہیں یہ الیکشن کمیشن کو نظر نہیں آ رہا ۔ ہم بہت بڑے مافیا کیخلاف لڑ رہے ہیںحکومت چوروں کو بچا رہی ہے شاہدخاقان کاغذی وزیراعظم ہے،اصل وزیراعظم فواد حسن فواد ہیں۔ عمران، پرویزخٹک ہو یا جہانگیر ترین کوئی احتساب سے بالاترنہیں، عمران خان نے تین دن سرکاری ہیلی کاپٹراستعمال کیااحتساب کو ویلکم کیا تھانوازشریف کامؤقف کہ الیکشن جیت گیاکیس ختم کردیں، غلط ہے انتخابی فتح کو دلیل مان لیں تو مجرموں کو کبھی سزائیں نہیں ملے لودھراںضمنی الیکشن کا نتیجہ توقعات کے برعکس لیکن ٹرینڈ کے مطابق ہے عموماً پیپلزپارٹی سندھ ، پی ٹی آئی کے پی اور ن لیگ پنجاب سے جیتتی ہے، البتہ ضمنی انتخاب سے طے ہوگیا کہ پنجاب میں مقابلہ ن لیگ اور پی ٹی آئی میں ہے کبھی وقت تھا کہ الطاف حسین کے بغیر ایم کیوایم کا تصور نہیں تھا آج ایم کیوایم کئی ٹکڑوں میں تقسیم ہوچکی ہے اسی طرح جب نوازشریف فیملی کو سزا ہوگی تو مسلم لیگ ن کا حال بھی ایم کیو ایم کی طرح ہی ہو گا اور اسی طرح سے اس کے ٹکڑے ہونگے۔ جہانگیر خان ترین پارٹی کا اثاثہ تھے ہیں اور رہیں گے ۔

مری بکل دے وچ چور ....

فاضل چیف جسٹس کے گذشتہ روز کے ریمارکس معنی خیز ہیں۔ کیا توہین عدالت کا مرتکب ...