جگر کے مریضوں کا علاج بھارت کے بجائے ترکی میں کرائیں گے: وزیر خارجہ

15 فروری 2018

اسلام آباد (عاطف خان، دی نیشن رپورٹ) بھارت کی طرف سے پاکستان میں جگر کے مریضوں کو ویزا انکاری کے بعد حکومت ایسے مریضوں کا ترکی میں رعایتی علاج کرانے کے لئے کوشاں ہے اور ویزوں کے لئے رابطہ کیا جائے گا۔ وزیر خارجہ خواجہ آصف نے قومی اسمبلی میں بتایا کہ مئی 2017ء سے بھارت نے جگر کے مریضوں کو مشروط طور پر ویزے جاری کئے جو کہ سفارتی آداب کے خلاف ہے۔ بھارتی ویزے کے حصول کے لئے پاکستانی مریضوں کو مسائل کا سامنا ہے۔ بعض ایسے مریض ہیں جنہیں فوری علاج کی ضرورت ہے۔ درخواست کے باوجود بھارت صرف مخصوص پاکستانی مریضوں کو ویزے دیتا ہے۔ ہم نے بھارتی حکام سے درخواست کی ہے مریضوں کے معاملے پر سیاست نہ کی جائے۔ اب ترکی میں پاکستانی مشن ترک حکام سے بات چیت کر رہا ہے تاکہ جگر کے مریض وہاں رعایت حاصل کرکے علاج کرا سکیں۔
خواجہ آصف