امریکہ افغانستان میں شکست تسلیم کرے برابری کے تعلقات چاہتے ہیں: بلاول

15 فروری 2018

واشنگٹن + سبی (آئی این پی) چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ افغانستان میں امن کیلئے امریکہ کو شکست تسلیم کرنا ہوگی‘ امریکہ جاننا ہی نہیں چاہتا کہ افغانستان میں کیا ہورہا ہے۔ بلاول بھٹو زرداری نے واشنگٹن میں روسی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا امریکہ جاننا ہی نہیں چاہتا کہ افغانستان میں کیا ہورہا ہے افغانستان کا 75 فیصد علاقہ دہشت گردی سے متاثر ہے۔ افغانستان میں امن کے لئے امریکہ کو شکست تسلیم کرنا ہوگی۔ شام میں امن کے لئے عوام کو فیصلے کرنے دیئے جائیں۔ انہوں نے کہا افغانستان‘ شام یا دوسرے ممالک کے عوام پر شخصی نظریات مسلط نہ کئے جائیں۔ پاکستان برابری اور باہمی احترام پر مبنی تعلقات چاہتا ہے۔ چین پاکستان کا عظیم دوست اور ہر موسم کا ساتھی ہے خوشی ہے کہ روس سے دوستانہ تعلقات قائم ہورہے ہیں۔ علاوہ ازیں پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ مفاہمتی سیاست کی رواداری آئینی تقاضوں کے مطابق سیاسی میدان میں عملی جدوجہد پر یقین رکھتے ہیں میرے پاس شہید نانا ذوالفقار علی بھٹو کا فلسفہ اور دختر مشرق شہید جمہوریت محترمہ بے نظیر بھٹو کی سوچ موجود ہیں کوئی سیاسی جماعت پیپلز پارٹی کا مقابلہ نہیں کرسکتی عوامی مسائل کو حل کرنے کیلئے پیپلز پارٹی کے پلیٹ فارم پر متحد و منظم ہونے کی ضرورت ہیں بلوچستان سمیت ملک بھر میں وارڈ سلح پر رکنیت سازی ایک منظم طریقے کار کے مطابق شروع کردیا ہے نوجوانوں کی طاقت سے عام انتخابات میں کلین سوپ کرکے عوامی خدمت کا تسلسل برقرار رکھا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہارہولو پروگرام بسلسلہ ممبرسازی کے سلسلے میںسبی میں عظیم ایشان ویڈیو لنک کے ذریعے کارکناں سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ بلاول نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ جمہوریت مستحکم اور فلاح ریاست کے قیام کیلئے جدوجہد کی مسلسل عزم اور عظیم قربانیوں سے بھری50سالہ بے مثال تاریخ رقم کی۔ میرے نانا شہید ذوالفقار علی بھٹو نے پاکستان کی سب سے پہلی ممبر سازی کا آغاز کیا جس میں ملک بھر سے لوگوں نے ان کا ساتھ دیا آج ملک کے حالات اس نہج پر پہنچ چکے ہیں کہ معاشرے میں بے یقینی اور مایوسی کی فضا قائم ہے محب وطن پاکستانی اور چیئرمین میں اپنا فرض سمجھتا ہوں کہ اس نازک صورت حال میں اپنا کردار ادا کرسکوں اور ملک کے کونے کونے میں ہر فرد سے رابط کار ی کرکے ان مسائل کا حل نکالیں اس پس منظر میں ملک گیر تنظیم سازی شروع کروں میں آپ سب کو تنظیم سازی شمولیت کی دعوت دیتا ہوں اور آپ کی امیدوں پر پورا اتروں گا۔ پیپلز پارٹی کے ضلعی صدرحاجی غلام رسول سیلاچی کے زیر اہتمام عظیم ایشان جلسہ عام منعقد ہوا جس کے مہمان خصوصی چیئرمین ضلع کونسل سبی و پیپلز پارٹی کے صوبائی رہنما ملک قائم الدین دہپال تھے جبکہ پیپلز یوتھ آرگنائزیشن کے صوبائی سینئر نائب صدر عامر ناصر، پاکستان پیپلز پارٹی کے ڈویژنل صدر یعقوب زیارت وال، سیکرٹری طلاعات ریحان بگٹی، ضلعی جنرل سیکرٹری عبدالمالک جتک، ضلعی سیکرٹری اطلاعات سید اصغر شاہ، سینئر نائب صدر سید اصف شاہ دوپاسی، ڈپٹی جنرل سیکرٹری جہانگیر خان راجپوت، مہراج خالد، نذیر صافی، عبید اللہ خجک، پیپلز پارٹی جعفر آباد کے صدر وزیر خان عمرانی، جنرل سیکرٹری کا مریڈ گل محمد کھوسہ۔ اوستہ محمد کے صدر محبوب علی، راشد حسین، عیسیٰ خان سیلاچی، محمد نواز سیلاچی، ڈویژنل صدر پیپلز یوتھ آرگنائزیشن ملک میوہ خان مگسی، نظام الدین دشتی، ملک شاہ جہان چاچڑ، بابل جان جتوئی، حاجی خان رئیسانی، بابو فتح محمد، محمد حفیظ، کلیم اللہ میمن، سراج رئیسانی سمیت سینکڑوں کی تعداد میں خواتین مرد کارکنان نے شرکت کی۔