اداروں کی مضبوطی سے ہی ملک ترقی کرسکتا ہے: فضل الرحمن

15 فروری 2018

ٹانک (نامہ نگار )جمعیت علماء اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہا ہے کہ اداروں کی مضبوطی سے ہی ملک ترقی اور غریب آدمی کی زندگی بدلی جاسکتی ہے، تبدیلی حکومت کی ناقص تعلیمی پالیسی کے باعث2013ء میں ملک بھر میں چھٹے نمبر پر آنے والی پشاور یونیورسٹی اب تیرویں نمبر پر پہنچ گئی ہے، تربیت کے بغیر تعلیم کا حصول کھوٹے سکے کی مانند ہے جو جیب بوجھ ہوتا ہے جسے استعمال نہیں کیا جاسکتا، ایم ایم اے دور میں عوام کو بنیادی تعلیم سے روشناس کرانے کیلئے مکتب سکول قائم کیے گئے مگر بعد میں آنے والی حکومتوں نے سیاسی کشمکش کی بنیاد پر انہیں بند کردیا، ٹانک میں گومل یونیورسٹی کیمپس کے قیام سے علم کی نئی شمع روشن ہوگی ،معیار تعلیم کو بہتر بنایا گیا توبہت جلد کیمپس یونیورسٹی کا درجہ حاصل کرلے گا ،صوبہ میں بد انتظامی کے باعث ہسپتال بوچڑ خانے کا نظارہ پیش کررہے ہیں،ان خیالات کا اظہار انہوں نے ٹانک میںنوتعمیر گومل یونیورسٹی کیمپس کے دورہ کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔