چھٹی مردم شماری کیلئے ڈپٹی کمشنرز کو بھجوائے جانیوالے فنڈز کا سپیشل آڈٹ کا فیصلہ

15 فروری 2018

گوجرانوالہ (نمائندہ خصوصی) وفاقی حکومت نے چھٹی مردم شماری کیلئے ڈپٹی کمشنرز کو بھجوائے جانے والے فنڈز کے سپیشل آڈٹ کا فیصلہ کرلیا اس سلسلے میں گوجرانوالہ ڈویژن کے ڈپٹی کمشنرز کو 64کروڑ 55لاکھ 84ہزار روپے بھجوائی جانے والی رقم کا مکمل آڈٹ کروانے تمام ووچرز و متعلقہ ریکارڈ سمیت رپورٹیں تیار کرکے ایک ماہ کے اندر وفاقی ادارہ شماریات کو ارسال کرنے کی ہدایات جاری کردی ہیں۔ وفاقی حکومت کی طرف سے جاری احکامات کے مطابق چھٹی مردم شماری کیلئے ڈپٹی کمشنرز کو فنڈز بھجوائے گئے تھے جوکہ عملے کی ٹریننگ، سٹاف کو اعزازیہ دینے، گاڑیوں کے کرائے، پٹرول اور سٹیشنری وغیرہ پر استعمال ہونے تھے۔ گوجرانوالہ، سیالکوٹ، گجرات، منڈی بہائوالدین، حافظ آباد اور نارووال کے ڈپٹی کمشنرز کو کہا گیا ہے کہ جو رقم استعمال ہوچکی ہے اس کا مکمل آڈٹ کروایا جائے اور جو رقم بچ گئی ہے اس کا ڈیمانڈ ڈرافٹ بحق وفاقی ادارہ شماریات اسلام آباد تیار کرواکراسے واپس بھجوایا جائے۔ ڈپٹی کمشنرز آڈٹ رپورٹ کے ساتھ تمام ووچرز و ادائیگیوں کی تفصیلات منسلک کرکے ایک ماہ کے اندر اندر وفاقی حکومت کو بھجوائیں گے۔ رپورٹ کے مطابق مردم شماری کیلئے گوجرانوالہ ضلع کو 18کروڑ 21لاکھ 11 ہزار روپے، سیالکوٹ کو 15کروڑ88لاکھ93ہزار روپے، گجرات کو 13کروڑ36لاکھ68ہزار روپے، نارووال کو 6کروڑ99لاکھ50ہزار روپے،منڈی بہائوالدین کو 6کروڑ58لاکھ16ہزار روپے اور حافظ آباد کو 5کروڑ31لاکھ46ہزار روپے جاری کئے گئے تھے۔