سانحہ بلدیہ کیس: رئوف صدیقی ودیگر پر فرد جرم عائد‘ ملزموں کا صحت جرم سے انکار

15 فروری 2018

کراچی (صباح نیوز)کراچی کی انسداد دہشت گردی کی عدالت نے سانحہ بلدیہ کیس میں ایم کیو ایم پاکستان کے رکن سندھ اسمبلی رئوف صدیقی سمیت دیگر ملزمان پر فرد جرم عائد کر دی۔ سانحہ بلدیہ کیس کی سماعت سینٹرل جیل میں واقع انسداد دہشت گردی کی عدالت میں ہوئی، سماعت کے موقع پر مقدمے میں گرفتار ملزم عبدالرحمان عرف بھولا اور زبیر چریا کو عدالت میں پیش کیا گیا۔اس کے علاوہ ضمانت پر رہا ملزم ایم کیو ایم کے رکن سندھ اسمبلی رئوف صدیقی و دیگر بھی پیش ہوئے۔عدالت نے ملزموں پر 6 سال بعد فرد جرم عائد کی تاہم ملزمان نے صحت جرم سے انکار کر دیا۔ملزموں کی جانب سے صحت جرم سے انکار پر عدالت نے 17 فروری کو استغاثہ کے گواہوں کو طلب کرلیا جب کہ عدالت نے کیس میں مفرور ملزم علی حسن قادری کو اشتہاری قرار دے دیا۔واضح رہے کہ 11 ستمبر 2012 کو بلدیہ ٹائون میں واقع گارمنٹ فیکٹری علی انٹر پرائزز میں آتشزدگی کے نتیجے میں 250 سے زائد افراد جاں بحق ہوگئے تھے جس کا مقدمہ تھانہ سائٹ اے میں درج کیا گیا تھا۔