الیکشن کمشن شفاف، غیر جانبدار انتخابات کیلئے غیر معمولی اختیارات استعمال کرے: سراج الحق

15 فروری 2018

لاہور (سپیشل رپورٹر) امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ ہر سطح کے الیکشن کو صاف شفاف اور غیر جانبدار بنانے کے لیے الیکشن کمیشن کے پاس غیر معمولی اختیارات ہیں مگر الیکشن کمیشن اپنے ان اختیارات کو استعمال کرتا ہے اور نہ اپنے بنائے ہوئے ضابطہ اخلاق کی پاسداری کی طرف توجہ دیتا ہے۔ سینٹ کے انتخابات میں پیسے کا استعمال باعث شرم ہے۔ سیاسی جماعتیں اپنے اندر سے ایسی کالی بھیڑوں کو نکال باہر کریں جو دولت کے بل بوتے پر لوگوں کے ضمیر کا سودا کرتی ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سینیٹ اجلاس میں شرکت کے بعد پارلیمنٹ کے باہر میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ جب تک انتخابی نظام درست نہیں ہوتا، عوام کی حقیقی قیادت سامنے نہیں آسکتی۔ الیکشن کمیشن 2018 ءکے انتخابات سے قبل انتخابی نظام کی درستگی اور اصلاحات کے نفاذ کی طرف توجہ دے۔ انہوں نے کہاکہ سیاست کے نام پر لوگوں کی امانتوں میں خیانت کرنے والے سیاستدان نہیں چور او ر لٹیرے ہیں۔ ایسے لوگوں کو سیاست سے بے دخل کرنا ہوگا ۔ انہوں نے کہاکہ جن کے پانامہ لیکس، دبئی اور لندن لیکس میں نام ہیں یا جنہوں نے بنکوں سے قرضے لے کر واپس نہیں کیے، جب تک عدالتیں انہیں کلیئر نہ کریں الیکشن کمیشن انہیں الیکشن لڑنے کی اجازت نہ دے۔
سراج الحق