متحدہشہداء کی امانت ہے، تقسیم نہیں ہونے دینگے، ڈاکٹر خالد مقبول

15 فروری 2018

کراچی (خصوصی رپورٹر)متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے کنوینر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم شہداء کی امانت ہے اسے تقسیم نہیں ہونے دیں گے ان خیالات کا اظہار انہوں نے رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینر اور اراکین رابطہ کمیٹی کے ہمراہ عزیز آباد کے شہداء قبرستان میں سابق چیئرمین ایم کیوایم عظیم احمد طارق شہید ، شہید انقلاب ڈاکٹر عمران فاروق اورحق پرست شہداء کی قبروں پر حاضری دی اور فاتحہ خوانی کی۔شہداء قبرستان میں حاضری دینے والوں میںرابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینر کنو ر نوید جمیل ، رابطہ کمیٹی کے اراکین امین الحق ، خواجہ اظہار ، فیصل سبزواری ، شبیر قائم خانی ، رئوف صدیقی ، زاہد منصوری ،عبد القادر خانزادہ ، عبد الحسیب ، حق پرست اراکین قومی وصوبائی اسمبلی ، ڈسٹرکٹس کے چیئرمین ، وائس چیئرمین کے علاوہ ایم کیوایم پاکستان کے مختلف شعبہ جات کے انچارجز و اراکین شامل تھے ۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے کہاکہ تحریک کی بنیادوں میں ہزاروں شہیدوں کا خون بھی شامل ہے ۔شہداء قبرستان جب بھی آتے ہیں ہم سب کے دل رنج و غم اور دکھ سے بھر جاتے ہیں آج کی خصوصی صورتحال میں ہمارا یہ دکھ اور غم کئی گنا زیادہ ہے ، ہم نے آج شہیدوں کی قبروں پر ان سے وعدہ کیا ہے کہ جس مقصد کیلئے انہوں نے اپنی جانوں کی قربانی دی ہے اس مقصد کو ہم کبھی نہیں بھولیں گے اور وہ تنظیم جو شہداء کی امانت ہے اسے انشاء اللہ تعالیٰ کمزوواور تقسیم نہیں ہونے دیں گے ۔مجھے امید ہے کہ بہت جلد مہاجر قوم اور پاکستان کے حق پرست عوام کو ضرور خوشخبریاں ملیں گے اور ان کی دعائیں قبول ہوں گی اور یہ تنظیم مستحکم اور متحد رہے گی ۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ سینیٹ میں ایم کیوایم سیٹیں محفوظ رہیں گی ہم اس بات کو یقینی بنائیں گے ایم کیوایم ہارس ٹریڈنگ کا شکار نہ ہو ۔ انہوں نے کہاکہ شہداء کے لواحقین ،ا سیروں اور لاپتہ ساتھیوں اہل خانہ ہماری پہلی ذمہ داری ہیں ، سب کو معلوم ہے کہ ہم پر غیر اعلانیہ خدمت خلق پر پابندی لگی ہے ، ہم زکوٰۃ ، فطرہ لیتے تھے اس سے لواحقین اور اہل خانہ کا خیال کرتے تھے ، ہم مد میں ہم نے تنظیمی خرچ بھی 70فیصد کم کیا ۔ ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ قومی اسمبلی کا اجلاس جاری ہے اور وہاں پر ایم کیوایم متحدہے ۔ایک بیان میں ڈاکٹرخالد مقبول نے کہا کہ بیرسٹرفر وغ نسیم نے مختصرمدت میں جو مقدمات پاکستان کی اعلیٰ عدالتو ںمیں لڑکرکا میابی حاصل کی ہے اس کی نظیرنہیں ملتی۔کر اچی بد امنی کیس میں ایم کیویم پرپابندی لگا ئے جا نے کی استداعاکی مخالفت کی اور ایم کیو ایم کوپا بندی سے بچایا۔مند رجہ بالاخد ما ت کی روشنی میں یہ کیسے کہاجا سکتاہے کہ وہ مہاجرقوم یاایم کیوایم کو کسی قسم کانقصان پہنچاسکتے ہے ان پرالز ام تراشی کر نے والے اپنی ناعاقبت اندیشی سے با ہرآئیںحقیقت کاسامناکریںمخصوص مفادات کیلئے ساتھیو ں کی قر با نیو ںکو مدم کر نے کی کو شش نہ کر یں۔قبل ازیں انہوں نے کوئٹہ کیعلاقے لانگو میں ہونے والے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے سیکیورٹی نوجوانوں کی شہادت پر افسوس کا اظہار کیا۔
خالد مقبول