حکو متی د عو ے اور حقا ئق

15 فروری 2018

مکرمی : چند بر س قبل جب امر یکہ نے افغا نستان پر حملہ کیا اور پا کستان نے اپنی افغا ن پا لیسی پر یو ٹر ن لیا تو پر ویز مشر ف نے کہا تھا کہ پا کستان امر یکہ سے ٹکڑ لینے کی پو زیشن میں نہیں ہے لہذا ہم امر یکہ کے اتحا دی بن جا ئیں تو ملک میں تر قی کا نیا دور شروع ہو گا، وگرنہ ہم پتھر کے دور میں پہنچ جا ئیں گے،یہ با تیں غلط بھی نہیں تھیں،امر یکہ کو افغا نستان پر حملہ کیے ہو ئے،تین سا ل سے زائد کا عر صہ گز ر ہو چکا ہے لیکن پا کستان میں خو شحا لی کا کو ئی دور شر وع نہیں ہو اہے،غر بت پہلے سے کئی گنا زیا دہ ہے،برآمدات میں اضا فے کے با وجو د مہنگا ئی بڑ ھتی جا رہی تھی،تیز معا شی تر قی کے با وجو د ملکی ادارے غیر ملکی کمپنیو ں کو بیچے جا رہے ہیں،سر ما یہ کاری میں اصا فہ ہو رہا تھا،بے روز گاری بڑ ھتی جا رہی تھی،ملکی خز انہ ز ر مبا د لہ سے بھر اہو اتھا،لیکن ور لڈ بینک اور د یگر ما حو لیا تی ادارو ں سے کشکو ل کے بجا ئے دا من پھیلا کر قر ضے لیے جا رہے تھے،اسی طر ح آ ج بھی یہی صو ر ت حا ل ہے، امیر دن بدن امیر ہو تا جا رہا ہے اور غریب طبقہ غر یب تر ہو تا جا رہا ہے،ہر فر د اپنا مفا د سو چتا ہے،دوسرے فر د کا ہما رے معا شر ے میں کو ئی ا حسا ا س نہیں کر تا دوسری طر ف حکمران چین کی با نسری بجا رہے ہیں ملک میں قتل غا رت کا با زار گر م ہے لیکن پھر بھی بقول حکو مت میں امن واما ن کی فضا ء قا ئم ہے حکمران تو حکمران د یگر ممبران اسمبلی بھی چین کی با نسری بجا رہے ہیں ،ایک طرف تو حکمران خو د کو عو امی نما ئندہ جتا تے ہیں اور دوسری طر ف بھا ری تنخو ائیں و صو ل کر رہے ہیں اور حکو مت کی طرف سے دی گئی مر اعا ت سے فا ئدہ اُ ٹھا رہے ہیں ،ہما رے ملک میں جسے مو قع ملتا ہے وہ اس سے فا ئدہ اُ ٹھاتے ہو ئے ملک کو نقصا ن پہچا نے کی ہر ممکن کو شیش کر تا ہے،سر کا ری ادارو ں میں افسر سے لیکر کلر ک تک ہر کو ئی نا جائز طر یقے سے پیسے کما نے کی کو شیش میں لگا ہو اہے ،حکو متیں امیر طبقوں کو زیا دہ سپو ر ٹ کر تی ہیں اور دوسری طرف ملک میں لا کھو ں افراد بے روزگا ر ہیں ،ہمیں اپنا کا م ایما ن داری سے کر نا چاہیے (عشرت شبیر اسلام آباد)