عدالت نے کرپشن پر سابق نیپالی وزیر داخلہ کو جیل بھجوا دیا

15 اگست 2012

کھٹمنڈو (اے ایف پی) نیپال کی اعلیٰ ترین عدالت نے کرپشن پر سابق وزیر داخلہ کھم بہادر کھڈکا کو سزا سنا کر جیل بھجوا دیا ۔ سابق وزیر داخلہ کو 18 ماہ قید اور 9.5 ملین نیپالی روپے (ایک لاکھ 10 ہزار امریکی ڈالر) جرمانہ کیا گیا ہے۔ سابق وزیر داخلہ نے اپنی مدت وزارت کے دوران اپنی جائےداد اور اثاثوں کا جو ریکاڈ دیا تھا وہ درست نہیں تھا اور وہ یہ ثابت نہیں کر سکے کہ انہوں نے 9.47 ملین نیپالی روپے کہاں سے کمائے۔ یہ بات ایک جج نے فرانسیسی خبررساں ایجنسی سے بات چیت کرتے ہوئے کہی۔ جج مسٹر شرسیتھا نے کہا کہ اگر کوئی جرم کرتا ہے تو چاہے وہ کتنا ہی طاقتور کیوں نہ ہو اسے سزا ضرور ملے گی۔ سابق وزیر داخلہ کھڈکا وزیر داخلہ کے علاوہ لوکل ڈویلپمنٹ منسٹر بھی رہے ہیں۔ اس سے قبل نیپال میں ایک اور سابق وزیر واگلے اور ایک حاضر سروس سیکرٹری جیا پرکاش گپتا کو بھی کرپشن پر جیل بھیجا جا چکا ہے۔