دولت مشترکہ کھیلوں میں پاکستان کا 10سال بعد پہلا گولڈ میڈل

15 اپریل 2018

لاہور(چودھری اشرف) پاکستان نے2010ء کے بعد کامن ویلتھ گیمز میں گولڈ میڈل جیتا پاکستان نے ایک طلائی تمغے سمیت مجموعی طور پر پانچ تمغے اپنے نام کئے۔ ریسلر محمد انعام نے پاکستان کیلئے پہلا طلائی تمغہ جیتنے کا اعزاز پایا، طیب رضا اور بلال نے کانسی کے تمغے جیتے تھے، طلحہ طالب اور نوح دستگیر بٹ نے ویٹ لفٹنگ مقابلوں میں کانسی کے تمغے جیتے تھے۔آسٹریلیا میں جاری کامن ویلتھ گیمز آج اتوار کو اختتام پذیر ہوں گے، گرین شرٹس نے ایونٹ میں ریسلنگ، ویٹ لفٹنگ، ایتھلیٹکس، سوئمنگ، شوٹنگ، ٹیبل ٹینس، بیڈمنٹن، سکوائش، ہاکی اور باکسنگ کے ایونٹس میں شرکت کی لیکن گرین شرٹس کے ایتھلیٹس صرف ریسلنگ اور ویٹ لفٹنگ میں تمغے جیتنے میں کامیاب رہے، پاکستان نے گیمز میں ایک طلائی تمغے سمیت مجموعی طور پر پانچ تمغے حاصل کئے۔ طیب رضا نے فری سٹائل 125 اور محمد بلال نے فری سٹائل 57کلوگرام کیٹگری میں کانسی کے تمغے جیتے، ویٹ لفٹنگ میں پاکستان کے طلحہ طالب نے 62 جبکہ نوح دستگیر بٹ نے 105پلس کیٹگری کے مقابلوں میں کانسی کے تمغے جیتے تھے۔ پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن کے سیکرٹری خالد محمود کی جانب سے دونوں پہلوانوں کو دو دو سو ڈالر نقد انعام اور شاباش دی۔ پاکستان کے لیے پہلا گولڈ میڈل جیتنے والے محمد انعام نے اپنا میڈل پاکستان کے نام کرتے ہوئے کہا کہ اس میڈل کے لیے چار سال سے محنت کر رہا تھا۔ خوشی ہے کہ آج ملک اور قوم کا نام روشن کرنے میں کامیاب ہوا ہوں۔ ان کا کہنا تھا کہ میڈل میں کسی ایک کی نہیں بلکہ پوری ٹیم جس میں پاکستان سپورٹس بورڈ، پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن، پاکستان ریسلنگ فیڈریش اور میرے کوچز کی محنت کے ساتھ والدین کی دعائیں شامل ہیں۔ انعام بٹ کا کہنا تھا کہ مزید محنت جاری رکھتے ہوئے ایشین گیمز کی تیاری کرونگا تاکہ پاکستان کے لیے مزید میڈل جیت سکوں۔ پاکستانی پہلوان انعام بٹ نے اپنی مدد آپ کے تحت تیاری کر کے کامن ویلتھ گیمز میں جا کر پاکستان کیلئے سونے کا تمغہ جیتا تو حکومت کو بھی ہوش آ گیا جس نے انعام بٹ سمیت تمغے جیتنے والے تمام پاکستانی کھلاڑیوں کیلئے انعامات کا اعلان کر دیا ہے۔کامن ویلتھ گیمز کی تیاری کیلئے 10 لاکھ روپے بھی نہ دینے والی حکومت نے گولڈ میڈل جیتنے کے بعد بٹ کیلئے 50 لاکھ روپے انعام کا اعلان کر دیا ہے۔ ذرائع کے مطابق یہ اعلان وفاقی وزیر ریاض پیرزادہ کی جانب سے کیا گیا ہے جن کا کہنا تھا کہ انعام بٹ کے اعزاز میں تقریب سجائی جائے گی اور انعام دیا جائے گا۔ذرائع کے مطابق وفاقی وزیر ریاض پیرزادہ نے ناصرف انعام بٹ کیلئے 50 لاکھ روپے انعام کا اعلان کیا ہے بلکہ برونز میڈل جیتنے والوں کو بھی فی کس 10 لاکھ روپے انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔ محمد انعام سے پہلے ریسلنگ میں محمد بلال اور طیب رضا نے کانسی کا تمغہ جیتا تھا۔اس جیت پر جہاں ملک میں جشن منا یا جارہا ہے تودوسری طرف آرمی چیف نے بھی ان کو مبارک باد دی ہے۔ڈی جی آئی ایس پی آرمیجرجنرل آصف غفور کے مطابق آرمی چیف نے گولڈ میڈ ل حاصل کرنے پرریسلر محمد انعام کو مبارک باد دی ہے اپنے پیغام میں ان کا کہنا تھا کہ’’پاکستان کا پرچم سر بلند کرکے قوم کا سر فخرسے بلند کردیا‘‘۔