پاکستان اور تاجکستان میں سیاحت کی کئی مشترکہ اقدار موجود ہیں، چوہدری عبدلغفور

15 اپریل 2018

اسلام آباد (نوائے وقت نیوز) برادر مسلم ممالک ہونے کے باعث پاکستان اور تاجکستان میں سیاحت کی کئی مشترکہ اقدار موجود ہیں۔ ممالک میں موجود سیاحت کے بیش بہا مواقع موجود ہیں۔ان خیالات کا اظہار چوہدری عبدلغفور خان،منیجنگ ڈائریکٹر پاکستان ٹورازم ڈیویلپمنٹ کارپوریشن ( پی ٹی ڈی سی ) نے تاجکستان کے پاکستان میں متعین سفیر جونونوف شیر علی سے اسلام آبادمیں ملاقات کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان سیاحوں کیلئے مکمل پُر امن ملک ہے ۔ ہم نے دنیا بھر کے سیاحوں کیلئے اپنے دروازے کھول دئیے ہیں تاکہ آئیں اور صورتحال کو خود دیکھیں اور ہماری میزبانی سے لطف اندوز ہوں۔باہمی تعاون کیلئے ضروری ہے کے دونوں ممالک میں براہِ راست ہوائی اور زمینی روابط استوار ہوں۔ دونوں برادر ممالک کے تعلقات کو سیاحتی سرگرمیوں کے فروغ سے مزید نکھارا جا سکتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پی ٹی ڈی سی اور تاجکستان کا قومی سیاحتی ادارہ ایک معاہدے پر دستخط کر سکتے ہیں ۔ جس کے تحت سیاحت کے شعبے میں مشترکہ تعاون کے نکات کے ذریعے دونوں ممالک کی سیاحت کی ترویج کی جاسکتی ہے۔ دنیا بھر میں قدرتی سیاحتی مناظر سے مالا مال پاکستان بلاشبہ تاجک باشندوں کیلئے پسندیدہ ترین سیا حتی مقام بن سکتا ہے۔ چوہدری عبدالغفور نے بتایا کہ تاجک ائیرلائنز کی پاکستان سے دو شنبہ کیلئے فلائٹس کیلئے درخواست پر اپنی سفارشات متعلقہ اداروں تک پہنچا دی گئی ہیں اور امید ہے کہ ان کی جلد منظوری مل جائے گی۔ تاجکستان کے سفیر جونونوف شیرعلی نے اس موقع پر کہا کہ پی ٹی ڈی سی کے ساتھ معاہدے کے نتیجے میں دونوں ممالک کے درمیاں ساحوں کی آمدورفت میں اضافہ ہو گا۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...