شہباز شریف کا پارٹی ورکرز کنونشن میں زبردست استقبال‘کارکنوں کا جوش و خروش دیدنی تھا ہال میں پرچموں کی بہار‘ نعرے بازی

15 اپریل 2018

کراچی (رپورٹ: شہزاد چغتائی) مسلم لیگ (ن) کے ورکرز کنونشن میں خواتین کی بڑی تعداد موجود تھی‘ پارٹی کے صدر شہباز شریف کا کارکنوں نے دو گھنٹے تک انتظار کیا‘ جب شہباز شریف پنڈال میں داخل ہوئے تو کارکنوں کا جوش و خروش عروج پر تھا‘ وہ کرسیوں پرکھڑے ہوگئے‘ تالیاں بجائیں اورنعرے بازی کی۔ کارکنوں نے مسلم لیگ کے پرچم بھی لہرائے‘ شہباز شریف کی تقریر کے دوران بھی زبردست نعرے بازی کی گئی‘ پورا ہال کھچا کھچ بھرا ہوا تھا اور تل دھرنے کی جگہ نہیں تھی۔ شہبازشریف نے آصف زرداری اور عمران خان کو ایک تھالی کے چٹے بٹے قرار دیا۔ شہباز شریف نے کراچی آمد کے بعد پورا دن گورنر ہائوس میں گزرا۔ دن بھر ان سے ملاقات کرنے والے وفود گورنر ہائوس میں پریس کانفرنس کرتے رہے جن کے ہمراہ وفاقی وزیر مشاہد اللہ خان ساتھ کھڑے ہوئے تھے‘ سب سے آخرمیں شہباز شریف نے پریس کانفرنس کی‘ جب شہباز شریف سندھ کے مختلف وفود سے بات چیت کر رہے تھے تو سندھ کے صدربابو سرفراز جتوئی باہر کھڑے تھے۔ ایک صحافی نے مشاہداللہ خان سے سوال کیا کہ آپ سندھ کے مسائل حل کرنے آئے ہیں اور مسلم لیگ سندھ کی قیادت کو باہرکھڑا کیا ہوا ہے۔