بابری مسجد شہید کرانے والے پراوین تو گڑیہ کو انتہائی ذلالت کا سامنا‘ بااعتماد ساتھی وشوا ہندو پریشد کی سربراہی کا انتخاب ہار گیا

15 اپریل 2018

لاہور (نیوز ڈیسک) 1992ء میں تاریخی بابری مسجد شہید کرانے کے اہم کردار اور انتہاپسند ہندو تنظیم وشوا ہندو پریشد کے انٹرنیشنل صدر پراوین توگڑیہ کو ذلت کا سامنا ہے۔ گزشتہ روز تنظیم کے انتخابات میں ان کے بااعتماد ساتھی راگھورام ریڈی جو انٹرنیشنل صدر کے امیدوار تھے ہار گئے۔ ریٹائر جسٹس وی ایس کوجے کو وی ایچ پی کا نیا صدر منتخب کیا گیا۔ پراوین توگڑیہ کو پارٹی کی ایگزیکٹو کمیٹی تک میں جگہ نہ ملی۔ واضح رہے کہ پراوین توگڑیہ کی کافی عرصہ سے زعفرانی انتہاپسند تحریک میں اپنے ساتھی نریندر مودی سے کھٹ پٹ چل رہی ہے۔ انہوں نے تنظیمی الیکشن میں دھاندلی ہونے کا الزام لگاتے ہوئے پیر کو بھوک ہڑتال کا اعلان کیا۔