ننکانہ صاحب: سکھوں کے مذہبی تہوار بیساکھی میلہ کی تقریبات، فول پروف سکیورٹی

15 اپریل 2018

لاہور، حسن ابدال(سپیشل رپورٹر+نامہ نگار)ننکانہ صاحب میں سکھوں کے مذہبی تہوار بیساکھی میلہ کی تقریبات جاری ہیں۔ تقریبات کے دوران سکھ یاتری ساتوں گوردواروں کی یاترا کرنے کے علاوہ اپنی مذہبی رسومات شبدکیرتن، اشنان، اکھنڈ پاٹھ، بھوگ اور ارداس کی ادائیگی کریں گے پنجاب حکومت کی طرف سے سکھ یاتریوں کی سہولت کے لیے پبلک کال آفس، بنک بوتھ، یوٹیلیٹی سٹور، فری ڈسپنسری کا انتظام کیا گیا سکھ یاتریوں کی سکیورٹی کے لئے فول پروف انتظامات کئے گئے ہیں شہر کے داخلی اور خارجی راستوں پر بیرئیر اور خار دار تاریں لگا ئی گئی ہیں جبکہ گوردوارہ کے مین گیٹ پر واک تھرو گیٹ نصب اور سکینر مشینیں لگائی گئی ہیں۔ شیخوپورہ ،قصور، اور فیصل آباد کے علاوہ دیگر شہروں سے بھی اضافی نفری طلب کی گئی ۔1200کے قریب پولیس افسران اور ملازمین ڈیوٹی سر انجام د ے رہے ہیں یہ تقریبات 18 اپریل تک جاری ر ہیں گی۔وفاقی وزیر برائے مذہبی امورسردار محمد یوسف نے کہا ہے کہ پاکستان امن و سلامتی والا ملک ہے ،یہاں ہمیں ہر طرح کی آزادی حاصل ہے۔ اسلامی اور ملکی قوانین میں اقلیتوں کو مکمل تحفظ حاصل ہے۔ سکھ مذہب کے روایتی تہوار بیساکھی میلہ کی مرکزی تقریب میں بھارت سمیت دنیا بھر سے ہزاروں سکھ یاتریوں نے شرکت کی۔ سردار یوسف نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بابا گورو نانک عظیم شخصیت ہیں دنیا بھر میں انکا احترام ہے‘ انکے 550 ویں جنم دن کے موقع پر خصوصی سکہ جاری کیا جائے گا۔ پاکستان بابا گورو نانک کی دھرتی ہے اور آج سکھ مسلم دوستی کا رشتہ مزید مضبوط ہو رہا ہے پاکستانی زائرین کے لیے بھارتی حکومت کا رویہ قابل مذمت اور افسوسناک زائرین کے لیے پابندیاں ختم ہونی چاہئیں ،ہماری حکومت نے اقلیتوں کے لیے خصوصی اقدامات کیے ہیں ۔ سیکرٹر ی بورڈ محمد طارق وزیر نے کہا کہ پاکستان میں بسنے والی اقلیتیں آزاد ہیں بھارت سمیت دنیا بھر سے آنے والے سکھ یاتریوں کو سکیورٹی سمیت مکمل سہولیات دی جا رہی ہیں۔بھارتی یاتریوں کے جتھہ لیڈر سردار گورو میت سنگھ نے سکھ یاتریوں اور گوردواروں کی تعمیر و ترقی کے لیے اقدامات پر حکومت پاکستان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے انہیں تاریخی قرار دیا اور سکھ قوم کی جانب سے تعریفی کلمات کہے ۔انہوںنے کہا کہ کشمیر میں بھارتی حکومت کی جانب سے نہتے کشمیریوں پر ظلم قابل مذمت ہے ۔سردار اوتار سنگھ سنگہیڑہ ،سردار پر تپال سنگھ ،سورن سنگھ گل،پردھان سردار تارا سنگھ ،رمیش سنگھ اروڑاسردار گوپال سنگھ چاولہ و دیگر نے خطاب میں سکھ میرج ایکٹ کے قیام پر خوشی کا اظہار کیا۔بھارت سے آنے والے سکھ یاتریوں نے تقریب کے آخر پر پاکستان زندہ باد اور خالصتان زندہ باد کے نعرے لگائے۔ نامہ نگار کے مطابق سردار محمدیوسف نے کہا ہے کہ حکومت چاہتی ہے کہ حج پرعدالتی فیصلہ جلد آئے تاکہ عوام کی مشکلات کا ازالہ ہو۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گوردوارہ سری پنجہ صاحب حسن ابدال میں رسم بھوگ میں شرکت کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ لیاقت نہرو معاہدے کی پاکستان پوری طرح پاسداری کر رہا ہے تاہم بھارت پاکستانی زائرین کو ویزے فراہم نہیں کر رہا جوکہ قابل مذمت ہے۔