عدالت کے بلانے پر نیک نیتی سے پیش ہوئے محاذ آرائی کے حامی نہیں‘ ہمارے بھی جذبات ہیں: سعد رفیق

15 اپریل 2018

لاہور(وقائع نگار خصوصی)وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ عدالت نے بلایا تو نیک نیتی سے پیش ہوئے ، ہم کسی محاذ آرائی کے حامی نہیں ہیں، لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ ہمارے کوئی جذبات نہیں، اداروں کی محاذ آرائی پر یقین نہیں رکھتا،ریلوے کی آمدنی زیادہ اور خسارہ کم ہو گیا ہے، ہم نے عدلیہ کی بحالی کےلئے جیلیں کاٹی ہیں، ہم نے جتنی بھی سیاست کی اس میں نہ نظریہ بدلا نہ وفاداریاں،میری سیاست سے اختلاف کیا جا سکتا ہے لیکن میرے خاندان کی سیاست سے نہیں،40سال سے سیاست میں ہوں اور بچہ بچہ مجھے جانتا ہے۔ میرا ضیا ءالحق سے کوئی تعلق نہیں رہا۔میں ایک سیاسی کارکن ہوں۔ریلوے کو پیروں پر کھڑا کیا مگر آج دل گرفتہ ہوں۔ ، ہم نیک نیتی سے عدالت میں آئے اور صرف ریلوے پر بات کرنے آئے،میرے ساتھ کام کرنے والے افسروں نے دل و جان سے دن رات کام کیا ہے۔ ہم نے کسی ملازم کو ریلوے سے نکالا اور نہ کوئی ٹرین بند کی۔ عمران اور زرداری ہم پر تنقید کر سکتے ہیں۔
سعد رفیق