سٹاک مارکیٹ: کاروباری ہفتہ کے دروان مندا برقرار‘ سرمایہ میں88 ارب38 کروڑ روپے کی کمی

15 اپریل 2018

کراچی (کامرس رپورٹر) پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں کاروباری ہفتہ پیر تاجمعہمندی کا رجحان رہا، کے ایس ای 100 انڈیکس565.76پوائنٹس کی کمی کے ساتھ 46071.86 پر بند ہوا، سرمایہ میں88ارب38کروڑ59 لاکھ63ہزار456روپے کی کمی رونما ہوئی جبکہ خرید و فروخت میں5کروڑ7 لاکھ61ہزار300حصص کی مندی ہوئی تاہم تجارتی حجم میں5ارب79کروڑ42 لاکھ16ہزار824 روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی۔تفصیلات کے مطابق حکمران جماعت کے رہنما نواز شریف کے خلاف سپریم کورٹ کی جانب سے تاحیات پاندی سے اسٹاک مارکیٹ میں منفی رجحان رہا جس کے باعث مارکیٹ میں کاروباری ہفتہ پیر تاجمعہ پی ایس ایکس میں مندی کا رجحان رہا ، پیر کے روز کے ایس ای 100انڈیکس میں57پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی، منگل کو انڈیکس میں103.89پوائنٹسکیمندی ہوئی، بدھ کے روز9.77پوائنٹس کا اضافہ رونما ہوا، جمعرات کے روز اسٹاک مارکیٹ میں مندی کے بادل پھر چھا گئے اور انڈیکس میں154.79پوائنٹس کی مندی ریکارڈ کی گئی اور جمعہ کے روزمندی کا تسلسل برقرار رہا اور انڈیکس میںمزید259.85پوائنٹس کی کمی ہوئی جبکہ 100انڈیکس میں مجموعی طور پر565.76پوائنٹس کی کمی سے 46600، 46500،46400،46300 ،46200اور46100کیچھ نفسیاتی بالائی حدوں سے گر کر46071.86کی سطح پر ریکارڈ کیا گیا۔ کے ایس ای 30انڈیکس میں بھی منفی رجحان کے باعث انڈیکس میں مندی رہی اورمجموعی طور پر429.15 پوائنٹس کیکمی سے23031.17 پر بند ہوا۔ کے ایس سی آل شیئر انڈیکس میںمجموعی طور پر 216.36 پوائنٹس کی مندی سے33096.87 رہا جبکہ کے ایم آئی 30انڈیکس میںکاروباری ہفتے کے دوران 552.18 پوائنٹسکی کمی کے بعد78676.95 پرریکارڈ کیا گیا۔ دریں اثناء بینکس ٹریڈ ایبل ( بی اے ٹی آئی ) انڈیکس میںکاروباری ہفتے کے دوران انڈیکس 648.26 پوائنٹس کی مندی سے17689.11 رہا ، تاہم آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل ( او جی ٹی آئی ) انڈیکس میں 18.72 پوائنٹس کی کمی سے 21687.89 پر ریکارڈ کیا گیا۔ حصص کی خرید و فروخت میں پی ایس ایکس-کے ایم آئی انڈیکس میں مجموعی طور پر 78.25 پوائنٹس کی مندی رونما ہوئی اور انڈیکس 22934.62 پر بند ہوا۔ مارکیٹ میںپیر تاجمعہ مجموعی طور پر1908 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 912کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی،907 کمپنیوں کے حصص کے بھائو میں مندی اور89کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔