ڈویژنل اسکول میں طالب علم پر وحشیانہ تشدد‘ ہڈیاں توڑ دیں

15 اپریل 2018

جہانیاں (نمائندہ نوائے وقت) ڈویژنل پبلک سکول جہاں میں طالب علم پر سکول ٹیچر کا وحشیانہ تشدد‘ ہڈیاں توڑ دیں تفصیل کے مطابق DPSجہانیاںمیںآئے روزتشددکے واقعات ہوتے رہتے ہیںگزشتہ روزملک رمضان جوکہ میتھ کا ٹیچرہے کلاس کے بچوںپروحشیانہ تشددکیاجس سے طلحہ عمران گوارایاکے کندھے کی ہڈی ٹوٹ گئی والدین نے پولیس سے ڈاکٹ لے کرمیڈیکل کروالیامیڈیکل آفیسرجہانیاں نے فائنل رائے کے لیئے بچے کونشترہسپتال ریفرکردیاوالدین کاکہناہے کہ DPSسکول جوکہ مہنگاترین سکول ہے نااہل پرنسپل کی وجہ سے ٹارچرسیل میںتبدیل ہوچکا ہے ذرائع سے معلوم ہواہے کہ آئے روز بچوںپرتشددٹیچرز کی پرائیویٹ اکیڈمیوںمیںداخلہ نہ لینا ہے جوبچے اکیڈمیوںمیںداخلہ نہیںلیتے ان پرتشددکیاجاتاہے۔کلاس کے تقریباًتیس بچوںنے ٹیچرملک رمضان کوتبدیل کرنے کی درخواست گزاری ہے۔والدین کاکہناہے کہ جب تک نااہل اورغیرقانونی مسلط پرنسپل کو برخاست نہیںکیاجاتا اس قسم کے تشددکے واقعات میںکمی آنے کی کوئی توقع نہیں بچوںکے والدین نے اسسٹنٹ کمشنرجہانیاں،ڈی سی اوخانیوال،کمشنرملتان سے فوری نوٹس لینے اورقانونی کارروائی کئے جانے کا مطالبہ کیا ہے ۔
وحشیانہ تشدد