اسلام کے نام پر ووٹ مانگنے پر پابندی نظریہ اسلام کیخلاف ہے:فضل الرحمن

15 اپریل 2013

لاہور (خصوصی نامہ نگار ) پاکستان مسلم لیگ ہم خیال کے صوبائی سیکرٹری اطلاعات میاں محمد آصف نے ساتھیوں سمیت جے یو آئی (ف) میں شمولیت کا اعلان کر دیا، جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے میاں محمد آصف کو لاہور کے حلقہ این اے121 پی پی 150 اور میاں وحید احمد کو پی پی149 سے عام انتخابات کیلئے جے یو آئی (ف) کا ٹکٹ جاری کر دیا ہے ۔ گزشتہ روز میاں محمد آصف نے میاں وحید احمد اور دیگر کے ہمراہ گلشن راوی کی فٹ بال گراﺅنڈ جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کی موجودگی میں پریس کانفرنس کے دوران جے یو آئی(ف) میں شمولیت کا باقاعدہ اعلان کیا اس موقع پر جے ےوآئی (ف) کے مرکزی سےکرٹری اطلاعات مولانا امجد خان، حافظ اعجاز الحق چودھری اور دےگر بھی موجود تھے۔ میاں محمد آصف اور میاں وحید احمد نے شمولیت کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو آج غیر ملکی مداخلت‘ کرپشن‘ بجلی کی لوڈشیڈنگ سمیت جن مسائل کا سامنا ہے ان کا حل صرف مولانا فضل الرحمن جیسے نظریاتی اور اصولی سیاستدان کے پاس ہے ۔ مولانا فضل الرحمن نے میاں محمد آصف‘ میاں وحید احمد اور دیگر کو جے یو آئی (ف) میں شمولیت پر خوش آمدید کہتے ہوئے کہا کہ جے یو آئی (ف) ملک بھر میں600 سے زائد امیدوار عام انتخابات میں سامنے لا رہی ہے کامیاب ہو کر پہلی ترجیح ملک کوامن کا گہوارہ بنانا ہے ۔ الیکشن کمیشن ہر روز انتخابی ضابطہ اخلاق میں اضافہ کر رہا ہے ‘ ریٹرننگ افسروں نے امیدواروں کا مذاق اڑایا ہے الیکشن کمیشن کو اپنی پوزیشن واضح کرنی چاہئے۔ انتخابی مہم کے دوران اسلام کے نام پر ووٹ مانگنے پر پابندی لگانا نظریہ اسلام کے خلاف ہے ۔ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں سب نے امریکہ کی پیروی کی، آج تمام سیاسی جماعتیں اپنے انتخابی منشور کے ساتھ میدان میں ہیں لیکن اب عوام نے فیصلہ کرنا ہے کہ وہ کسی کا انتخاب کرتے ہیں۔ ہم نے ہمیشہ پاکستانی قوم کی امنگوں کی ترجمانی کی ہے ۔ جن لوگوں کے اعصاب پر غلامی سوار ہے ایسے لوگ ملک میں امن نہیں لا سکتے۔ ہم دیوالیہ پن کے قریب کھڑے ہیں۔ تما م ادارے تباہ ہو رہے ہیں یہ ملک کو کہاں لے جایا جا رہا ہے ۔ جب ریٹرننگ افسروں کو دین کا علم نہیں تو ایسے ہی گھٹیا سوال ہونگے۔ آج لوگ امریکہ اور یورپ سے منشور ادھار لے رہے ہیں‘ اسلام کے نام کے استعمال پر پابندی لگانے والا الیکشن کمشنر سیکولر ہے پاکستان اسلامی جمہوری ملک ہے عدالت سمیت کسی کو یہ حق حاصل نہیں کہ وہ اسلام کا نام استعمال کرنے پر پابندی لگائے جو اسلام کے نام پر پابندی لگاتا ہے ہم اس کے وجود کو تسلیم نہیں کرتے۔ آرٹیکل62 اور63پر مکمل عملدرآمد ہونا چاہئے۔ قبل ازیں بلوچستان کے شہر پشین میں اسلام زندہ باد کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ بلوچستان میں بندوق اور موت کا رق ختم کرنا ہے تو قوم کو ہمارا ساتھ دینا ہوگا ہم برسراقتدار آ کر کمشن کی بنیاد پر دیئے گئے ٹھیکے اور معاہدے ختم کرکے بلوچستان اور دیگر صوبوں کے عوام کو وسائل پر اختیار دینگے۔