امریکہ، یورپ ریلیف سرگرمیوں میں حصہ لینے والے مسلمانوں کو بھی بڑا خطرہ سمجھتے ہیں: حافظ سعید

15 اپریل 2013

لاہور (خصوصی نامہ نگار + ثناءنیوز) جماعة الدعوة کے امیر پروفیسر حافظ محمد سعید نے کہا ہے کہ امریکہ اور یورپ ریلیف سرگرمیوں میں حصہ لینے والے مسلمانوں کو بھی اپنے لئے بہت بڑا خطرہ سمجھتے ہیں۔ جھوٹے اور بے بنیاد پروپیگن©ڈا سے مسلمانوں کے کردار کو مسخ کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں ۔ ڈاکٹرز معاشرے کا اہم طبقہ ہیں ۔ وہ افراد کی اسلامی تربیت میں بنیادی کردار ادا کرسکتے ہیں ۔ مسلم میڈیکل مشن کے ڈاکٹرز پورے ملک میں امدادی سرگرمیوں کو وسعت دیں۔ فلاح انسانیت فاﺅنڈیشن اور میڈیکل مشن کی امدادی سرگرمیوں سے بلوچستان اور سندھ میں قومیت پرستی کی سوچیں ختم ہو رہی ہیں ۔ ہم مسلمانوں کی طرح غریب و مستحق ہندوﺅں کی بھی مدد کر رہے ہیں ۔ وہ ایوان اقبال میں مسلم میڈیکل مشن کے زیر اہتمام میڈیکل کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ انہوں نے کہاکہ امریکہ گوادر پورٹ پر قبضہ اور افغانستان سے فوج نکال کر بلوچستان میں داخل کرنے میں کامیاب نہیں ہو سکا۔ گلگت اور دیوسائی کا میدان جسے دنیا کی چھت کہا جاتا ہے اس پر بیٹھ کر خلیج اور وسط ایشیا کی دولت پر قبضہ کرنے کا اس کا خواب بھی پورا نہیں ہو سکا۔ پچھلے گیارہ برسوں کی جنگ کے دوران اسے افغانستان میں بدترین شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ وہ بے بس ہو کر طالبان سے مذاکرات کی بھیک مانگ رہا ہے۔ امریکہ کی تمام کوششیں اب اس لئے ہیںکہ اس خطہ سے کس طرح محفوظ انخلاءکا راستہ مل سکتا ہے؟۔ مسلمانوں کی قربانیوں کے نتیجہ میں دنیا کے حالات تیزی سے تبدیل ہو رہے ہیں ۔ امریکیوں کو اس بات کی بھی سخت پریشانی لاحق ہے کہ واپس جاتے وقت اسے اسلحہ وغیرہ ساتھ لیجانے کی بھی اجازت نہیں مل رہی۔ انہوں نے کہاکہ امریکہ ویورپ نے ریلیف سرگرمیوں کا ڈھونگ رچا کر دنیا کو غلامی کی زنجیروں میں جکڑے رکھا لیکن اب ان کا اصل چہرہ کھل کر دنیا کے سامنے بے نقاب ہو چکا ہے۔ امریکہ اور روس جو ماضی میں سپر پاور سمجھے جاتے تھے مستقبل میں ان کا کوئی کردار نہیں۔ شکست خوردہ امریکہ اپنے نظاموں کو نہیں بچا سکے گا۔ امت مسلمہ کو جلد اسلام دشمن قوتوں کی غلامی سے نجات ملے گی۔ حافظ محمد سعید نے کہاکہ بلوچستان کے سرداروں نے ہمیں مختلف علاقوں میںریلیف کا کام کرنے کو کہا ہے ۔ ہم سمجھتے ہیں کہ اگرچہ ہمارے پاس وسائل محدود ہیں لیکن ہم مصائب ومشکلات میں مبتلا اپنے بھائیوں کو کسی صورت تنہا نہیں چھوڑیں گے۔ بلوچستان میں تعلیم و صحت کے منصوبوںکو پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے۔