جاپانی وزیراعظم نے جزیرہ ایوجیما کا دورہ کیا، فوجیوں کیلئے دعائیہ تقریب میں شرکت

15 اپریل 2013

ٹوکیو (اے پی پی) جاپان کے وزیراعظم شنزو ایبے نے جزیرہ ایوجیما کا دورہ کیا جہاں انہوں نے جنگ عظیم دوم میں مارے جانے والے ہزاروں شہریوں کی باقیات کی تلاش کےلئے جاری کام کا جائزہ لیا اور اس حوالے سے دعائیہ تقریب میں بھی شرکت کی۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق امریکہ اور جاپان کے درمیان ہونے والی شدید ترین جنگ میں اس جزیرے پر 22 ہزار سے زائد جاپانی شہری مارے گئے تھے تاہم ان میں سے اکثر کی باقیات تلاش کرلی گئی ہیں صرف چند فیصد افراد کی باقیات تلاش کرنے کا کام جاری ہے۔ یاد رہے 1945 کی جنگ عظیم دوم میں مغربی اتحادیوں اور جاپان کے درمیان جنگ کے دوران جزیرہ ایووجیما میں 22 ہزار جبکہ مکمل طور پر 24 لاکھ جاپانی لقمہ اجل بن گئے تھے جن میں سے اب تک صرف 11 لاکھ 30 ہزار افراد کی باقیات تلاش کی جاسکی ہیں جبکہ بقیہ افراد کی باقیات تلاش کرنے کےلئے 2010 سے ایک قومی منصوبے پر کام جاری ہے۔