بدترین لوڈشیڈنگ یا پری پول ری گنگ

15 اپریل 2013


مکرمی ! پنجاب اور خاص طور پر لاہور میں 16 سے 18 گھنٹے کی بدترین لوڈشیڈنگ کی مثال اس نگران حکومت کی بے حسی یا لاپرواہی کا نتیجہ ہے یا پھر پریشان حال ستائے ہوئے لوگوں کو ہنگامے اور گڑبڑ پیدا کرنے پر مجبور کر کے اور حالات خراب کرنے کے بعد اپنے اقتدار کو طول دینے کا پروگرام، یا پھر یہ بھی ہو سکتا ہے کہ کسی سوچی سمجھی سکیم کے تحت لوگوں کو اتنا زچ کرو کہ وہ سابقہ حکومت کی لوڈشیڈنگ بھول کر اُن کو بہتر سمجھنا شروع کر دیں۔ کیا کوئی اس کا نوٹس لے گا؟ ہم تو ظلم سہنے کے عادی ہو گئے ہیں۔ (سرور قریشی ۔ لاہور)