انصاف کی رسی

15 اپریل 2013

مکرمی! سیاسی اور غیر سیاسی حکومتیں ترازوکی پاسداری کریں تو خدا بھی برکت ڈال دے۔ کبھی کانگرو کورٹس کہہ کر اور کبھی کھلم کھلا عدالتی خلاف ورزی کر کے ترازو کا مذاق بنایا گیا اور پاکستان ”اِعدِلُو“ کی برکتوں سے دور رہا۔ تقویٰ سے دوری رہی اور ”اََکرَمکُم“ سے مہجوری رہی۔ کامیابی کی کنجی تو اطاعت الٰہی ہے اس کے صدقے فضل و کرم ہے۔ ایمان کی کمزوری ملاخطہ ہو کہ اللہ کو موقع دینے سے ڈرتے ہیں، ذاتی زندگی میں بھی اورقومی دھارے میں بھی۔ یہ سب اللہ کا ہے، انسان بھی اور مال بھی۔ پھر اللہ کی بات کی حکمرانی نہیں جچتی ہے۔ آئیے، آج سے ہی اپنی ذاتی زندگی اور قومی زندگی میں خدائی بات کے عمل کو شعار بنائیں اور فلاح پائیں۔ ابتدا ایسے کریں کہ شکرانے کے دو نقل ادا کریںکہ قلندر صفت منصف اب عطاہوچکے ہیں۔ انصاف کی رسی کو بل دیں تو دین دنیا دونوں مالامال۔ (معین الحق جوہر ٹاﺅن لاہور)