اقتصادی راہداری کے منصوبوں کو احتیاط سے منظم کیا جائے ،آئی ایم ایف کا پاکستان کو مشورہ

14 اکتوبر 2016 (13:37)

اسلام آباد : عالمی مالیاتی ادارے ( آئی ایم ایف) نے پاکستان سے کہا ہے کہ وہ پاک چین اقتصادی راہداری کے پروجیکٹس کو احتیاط سے انتظام کرے اور اصلاحاتی ایجنڈے کو آگے بڑھائے تاکہ صارفین کے طویل المیعاد مفادات کا تحفظ ہو سکے اور معاشی خوشحالی کو ممکن بنایا جا سکے میڈیا رپورٹس کے مطابق یہاں ویڈیو لنک کے ذریعے خطاب کرتے ہوئے آئی ایم ایف کے پاکستان کے لئے مشن چیف ھیرالڈفنگر نے کہا کہ پاکستان کو سالانہ 7 فیصد کی شرح سے معاشی شرح نمو ( گروتھ ) درکار ہے تاکہ 2 ملین سے زائد نوجوانوں کو ملازمتیں مل سکیں انہوں نے کہا کہ ٹیکس اور جی ڈی پی کی نسبت بڑھانے کی ضرورت ہے انہوں کئی اہم چیلنجز کا ذکر بھی کیا اور کہا کہ جی ڈی پی کی نسبت برآمدات تھوڑی ہیں اور ان میں کمی آ رہی ہے ۔