کچی آبادیاں دہشت گردوں کی محفوظ پناہ گاہیں بن گئیں: پولیس چیف کراچی

14 اکتوبر 2016

کراچی (نوائے وقت رپورٹ) دہشتگردوں کے چھپنے کیلئے کراچی شہر میں کئی پناہ گاہوں کا انکشاف ہوا ہے۔ کراچی پولیس چیف مشتاق مہر نے کہا ہے کہ شہر کی کچی آبادیاں دہشتگردوں کو انتہائی محفوظ پناہ گاہیں فراہم کرتی ہیں۔ کراچی میں ہونے والی دہشتگرد کارروائیاں گوریلا طرز کی ہوتی ہیں۔ کارروائیوں کے بعد دہشتگرد کئی ماہ تک کچی آبادیوں میں انڈر گراؤنڈ ہو جاتے ہیں۔ بعض دفعہ معلومات ہوتی ہیں، تب بھی ان کو پکڑنا مشکل ہو جاتا ہے۔ دہشتگرد غیر قانونی طریقے سے ملک سے باہر بھی چلے جاتے ہیں۔ فرار دہشتگردوں کو واپس لانے کیلئے انٹرپول سے رابطہ کر رہے ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے سندھ کی 100 کچی آبادیوں کو ریگولرائز کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ سندھ میں 1409 کچی آبادیاں ہیں۔