چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کیخلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ایک اور ریفرنس دائر

14 اکتوبر 2016

اسلام آباد ( وقائع نگار) چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ محمد انور خان کاسی کی عہدے سے برطرفی کے لیے سپریم جوڈیشل کونسل میں ایک اور ریفرنس دائر کر دیا گیا ہے جس پر فیصلے تک چیف جسٹس کو کام سے روکنے کی استدعا کی گئی ہے ۔اسلام آباد ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے جنرل سیکرٹری وقاص ملک نے بارروم میں پرےس کانفرنس میں بتایا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ میں غیر قانونی بھرتیوں کے خلاف سپریم کورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد کے لئے قانونی راستہ اختیار کرتے ہوئے چیف جسٹس کے خلاف اختیارات کے ناجائز استعمال اور اقربا پروری کی بنیاد پر سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس دائر کیا گیا ہے۔ غیر قانونی طور پر تقررہونے والوں کی برطرفی کافی نہیں بلکہ ذمہ داران کے خلاف کارروائی بھی از حد ضروری ہے ۔اپنے حلف کی پاسداری نہ کرنے اور جوڈیشل مس کنڈکٹ پر چیف جسٹس کو اخلاقی طور پر مستعفی ہوجانا چاہئے تھا ۔ تاہم مستعفی نہ ہونے کی صورت میں چیف جسٹس کی عدالت کا بائیکاٹ کیا جائے گا اور جنرل باڈی اجلاس میں عدالت کی تالہ بندی کرنے کی تجویز پر بھی غور کیا جائے گا۔
ریفرنس