’’پاکستان سے دراندازی کے ثبوت نہیں ملے‘‘ بھارتی حکومت نے فوج کا دعویٰ مسترد کر دیا

14 نومبر 2013

نئی دہلی (آئی این پی)  بھارتی حکومت نے فوج کی جانب سے کیرن سیکٹر میں پاکستان کی طرف سے در اندازوں کے داخلے کا دعویٰ مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس حوالے سے کوئی ٹھوس ثبوت نہیں۔ بدھ کو بھارتی اخبار انڈین ایکسپریس  نے رپورٹ میں بھارتی فوج کے تمام جھوٹ کا پردہ چاک کرتے ہوئے انکشاف کیا ہے کہ سیکورٹی کے حوالے سے ایک اعلیٰ سطحی اجلاس میں بھارتی فوج سے کہا گیا تھا کہ وہ پاکستان کیساتھ ملنے والی سرحد کے قریب داخلی علاقے میں مورچہ بندی کرے تا کہ در اندازی کی کوشش کرنے والوں کو پھنسایا جا سکے۔ سپیشل فورسز کی جانب سے یہ کہا گیا کہ اکتوبر میں پاکستان سے بڑے پیمانے پر در اندازی ہوئی اور پاکستانی فورسز کے حمایت یافتہ دراندازوں نے ایک گائوں شالا بھالو پر بھی قبضہ کر لیا جس کا قبضہ چھڑوانے کے لیے بھارتی فوج کا کیرن سیکٹر میں 15دن سے زائد تک بھی آپریشن جاری رہا۔ رپورٹ کے مطابق بعض حکام کی طرف سے یہ بھی کہا کہ کیرن سیکٹر آپریشن پر فوج نے جھوٹ بولا اور یہ محض ایک ڈرامہ تھا۔