مسلمانوں کو تقسیم کرنے کی ہر سازش کو ناکام بنانا ہو گا: مقررین

14 نومبر 2013

ملتان (نامہ نگارخصوصی) متحدہ مسلم موومنٹ پاکستان کے زیراہتمام فاروق و حسین کانفرنس زیر صدارت ممتاز عالم دین و کشمیری رہنما علامہ رشیدارشد کشمیری منعقد ہوئی۔ تقریب میں تمام مکاتب فکر کے علمائے کرام اور سیاسی و سماجی رہنماﺅں نے شرکت کی مقررین نے تقریب سے اظہاروخیال کرتے ہوئے کہا کہ عالم اسلام کو متحد ہونے کی ضرورت ہے۔ باہمی اختلافات کو بھلا کر امن و اتحاد کو فروغ دینے کے لئے تمام مکاتب فکر کو مشترکہ کوشش کرنا ہو گی۔ صحابہ کرامؓ اور اہل بیت کی محبت کے نام پر مسلمانوں کو تقسیم کرنے کی ہر کوشش کو ناکام بنانا ہو گا۔ محترم سید عباس رضا مشہدی نے شیعہ مکتب فکر کی نمائندگی کرتے ہوئے کہا کہ صحابہ کرامؓ ہمارے سر کا تاج اور اہل بیت ہماری آنکھوں کا نور ہیں۔ ممتاز عالم دین علامہ ضمیرالحسن نقوی نے کہا کہ حضرت عمرفاروقؓ کی شہادت اور امام عالی مقامؓ کی شہادت کے حوالے سے مشترکہ تقریب بہت خوش آئند ہے اور اس سے شیعہ مکتبہ فکر سے وابستہ غلط باتوں کو رد کرنے کا موقع ملے گا۔ مسلمانوں کے دشمن جو مسلمانوں کو تقسیم دیکھنا چاہتے ہیں ان کی سازشوں کو ناکام بنانا تمام مسلمانوں کی ذمہ داری ہے۔ تقریب سے اظہار خیال کرتے ہوئے پروفیسر محمدحنیف چودھری نے کہا کہ آج پوری دنیا میں مسلمانوں کے امیج کو تباہ کیا جا رہا ہے۔ علماءکرام کی یہ ذمہ داری بنتی ہے کہ مسلمانوں کے اتحاد کے حوالے سے اپنا کردار ادا کریں ممتاز عالم دین مفتی غلام مصطفی اور علامہ عبدالحق مجاہداطہر بخاری نے کہا کہ غیرمسلم ہمیں مسلمان سمجھتے ہیں اور ہم ایک دوسرے کو کافر کہہ کے نفرتیں بڑھا رہے ہیں ہمیں اپنی گفتگو میں احتیاط کرنا ہو گی۔ تقریب سے عامرشہزاد صدیقی‘ فاروق لنگاہ‘ راﺅ انیس‘ شاہد لودھی عیسیٰ بھٹہ اکرم نوری سلیم بخاری‘ جندوڈا اعوان‘ زیب رسول‘ جاوید قریشی‘ ملک منصور جمیل قریشی‘ پروفیسر ریاض‘ خالد بھٹی‘ عبدالستار مدنی و دیگر نے بھی اظہارخیال کیا جبکہ آخر میں پیر مفتی عبدالرازق قدوسی نے عالم اسلام اور وطن عزیز کے لئے دعا کروائے۔ تقریب کے میزبان میاں عامرمحمود نقشبندی نے نقابت کے فرائض ادا کئے۔