وکلا ججوں سے تعاون اور مقدمات کے غیر ضروری التواء سے گریز کریں:چیف جسٹس

14 جولائی 2009
اسلام آباد (ثناء نیوز) چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری سے کھاریاں بار ایسوسی ایشن کے صدر کی سر براہی میں آنے والے 23 رکنی وفد نے پیر کے روز ملاقات کی۔ چیف جسٹس نے اس موقع پر وکلاء کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ عدلیہ کی بحالی کے بعد عدالتوں اور وکلاء کے کندھوں پر بھاری ذمہ داری عائد ہو تی ہے چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ مقدمات کی سماعت کے حوالے سے وکلاء ججوں سے تعاون کرتے ہوئے دلائل کی تیاری کر کے عدالت میں پیش ہوں اور غیر ضروری التواء سے گریز کریں۔کھاریاں بار کے ممبران نے چیف جسٹس کو قومی جوڈیشل پالیسی کے نفاذ کے لئے اپنی مکمل حمایت کی یقین دہانی کرائی‘ وفد نے کھاریاں بار کی جانب سے چیف جسٹس کو اعزازی شیلڈ بھی دی۔
جسٹس افتخار