حکومت نے ایس ایم ایس یا ای میل پر کوئی پابندی عائد نہیں کی: رحمن ملک

14 جولائی 2009
اسلام آباد (اپنے سٹاف رپورٹر سے + ایجنسیاں) وفاقی وزیر داخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ دہشت گردی سے نمٹنے کے لیے اسلام آباد میں 20 ہزار نئی بھرتی کی جائے گی جس میں دس ہزار کانسٹیبل شامل ہوں گے۔ اسلام آباد نے ایف ایٹ خودکش حملہ کے ماسٹر مائنڈ سمیت 31 دہشت گرد گرفتار کئے‘ جن کی نشاندہی پر مزید گرفتاریاں کی جا رہی ہیں۔ راولپنڈی ڈویژن سے بھی دہشت گردی میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کی جا رہی ہے۔ گرفتار دہشت گردوں کا تعلق بونیر‘ وزیرستان اور مالاکنڈ سوات کی دہشت گردی سے ہے۔ نیشنل لائبریری میں اسلام آباد ماڈل ٹریفک پولیس کی جانب سے ایف ایم ریڈیو چینل 92.4 اور جدید ڈرائیونگ لائسنس کے افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مسلح افواج‘ فرنٹیئر کانسٹیبلری اور پولیس نے دہشت گردی کے خلاف بہترین اقدامات کئے ہیں جتنے ملزم اب تک پولیس نے گرفتار کئے ہیں ان کا تعلق بیت اللہ محسود گروپ سے ہے۔ انہوں نے کہا کہ سوات اور ملحقہ علاقوں میں فوجی آپریشن کے دوران شدت پسندوں کے بڑے بڑے کمانڈر مارے جا چکے ہیں‘ مولانا فضل اللہ شدید زخمی ہیں۔ چین سے جو سکیورٹی کے آٰلات آ رہے ہیں ان میں ہر صوبے کا برابر کا حصہ ہے۔ فوجی اور سویلین قیادت میں کوئی اختلاف نہیں۔ ٹیلی فون کی ریکاڈنگ اور ٹریس کرنے کا سسٹم موجود ہے لیکن اسلام آباد انتظامیہ سمیت کسی صوبے کو یہ سسٹم استعمال کرنے کی اجازت نہیں دے سکتے۔ حکومت نے ایس ایم ایس یا ای میل پر کوئی پابندی عائد نہیں کی۔ سینکڑوں کی تعداد میں غلط ایس ایم ایس اور ای میل کے حوالے سے شکایات موصول ہوئی تھیں۔ جن لوگوں نے شکایات کیں ان میں سٹوڈنٹس‘ بچوں کے والدین‘ خواتین ارکان پارلیمنٹ اور دیگر رہنما شامل ہیں جن کو نازیبا اور دھمکی آمیز ایس ایم ایس اور ای میل موصول ہوتے ہیں۔ تحقیق کی تو پتہ چلا کہ بعض ویب سائٹس باہر کے ملکوں میں رجسٹرڈ ہیں اور ان کی شناخت بھی ہوئی ہے‘ سیکرٹری جنرل انٹرپول سے رابطہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسے واقعات میں کئی نوجوانوں کو بھی گرفتار کیا گیا ہے جن لوگوں کو غلط ایس ایم ایس یا ای میل آتے ہیں وہ شکایت کریں ہم ٹریس کریں گے۔ میاں چنوں میں دھماکہ سکول ماسٹر ریاض کے گھر پر ہوا ہے جہاں ان کی والدہ‘ بہنیں حافظ قرآن تھیں اور بچوں کو تعلیم دے رہی تھیں‘ دھماکہ پہلے سے وہاں پر سٹوریج دھماکہ خیز مواد سے ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ ہفتے پنجاب میں امن و امان کے حوالے سے اجلاس منعقد کریں گے۔