ایک تصویر ایک کہانی....

13 اکتوبر 2017

بیرون شیرانوالہ گیٹ مین روڈ پر مائی زینب بی بی گزشتہ ساتھ سال سے بھٹی چلا رہی ہے۔ اس کا خاوند ماشکی تھا۔ دونوں مل کر تین بچوں کی کفالت کیا کرتے تھے۔ خاوند کی وفات کے بعد تینوں بچوں کو اپنی حیثیت کے مطابق بیاہا۔ جو مختلف مزدوریاں کر کے اپنے اپنے کنبے پال رہے ہیں۔ مگر انہوں نے ہر حال میں اپنی اس مزدوری ی ڈیوٹی کو نبھایا۔ چند سال قبل ایک بیٹے کی وفات ہوگئی اب اس کے چار بچے میرے پاس ہیں۔ کرائے کا گھر ہے عمر کے اس حصے میں کوئی ساتھ نبھانے والا ہوتا الٹا چار بچوں کا بوجھ بھی اٹھانا پڑ رہا ہے۔ مگر ہمت نہیں ہماری اپنی محنت ن سے یتیم بچوں کو پال رہی ہوں اللہ تعالی کا شکر ہے محنت ضرور کر رہی ہوں۔ کسی کے سامنے کبھی ہاتھ نہیں پھیلایا۔ بس دعا ہ کہ اللہ تعالی صحت و تندرستی عطا کئے رکھے۔(فوٹو: گل نواز)

a