ریفرنس دوسری عدالت بھجوانے سے متعلق فیصلہ کیلئے ایک ہفتہ کی مہلت

Sep 12, 2018

اسلام آباد (نمائندہ نوائے وقت) سپریم کورٹ آف پاکستان میں سابق وزیراعظم میاں نواز شریف اور اہل خانہ کے خلاف احتساب عدالت میں جاری ریفرنسز کو دوسری عدالت میں منتقل کرنے کے خلاف نیب اپیل پر سماعت کے دوران عدالت نے ہائیکورٹ کو تفصیلی فیصلے کے اجراء کے لیئے ایک ہفتے کی مہلت دیدی ہے۔ چیف جسٹس میا ں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی عدالتی بنچ نے اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے پر نیب کی جانب سے دا ئر اپیل کی سماعت کی۔ عدالت کو نیب کے پراسیکیوٹر نے بتایا کہ ہمیں کچھ وقت چاہئیے کیونکہ ابھی تک ہم کو اسلام آباد ہائی کو رٹ سے تفصیلی فیصلہ نہیں ملا، ہائیکورٹ نے مختصر فیصلہ دیتے ہوئے ریفرنسز دوسری عدالت منتقل کئے ہیں اور ہم ابھی تک تفصیلی فیصلے کا انتظار کر رہے ہیں ۔ سپریم کورٹ نے کہا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کے رجسٹرار تفصیلی فیصلے کیلئے متعلقہ جج صاحبان تک عدالتی ہدایت پہنچائیں تاکہ ریفرنسز منتقلی کا تفصیلی فیصلہ سنایا جا سکے ۔عدالت کی جانب سے حکم دیا گیا اسلام آباد ہائیکورٹ ایک ہفتے میں ریفرنسز کی دوسری عدالت میں منتقلی کے بارے میں تفیصلی فیصلہ جاری کرے، اگر ایک ہفتے میں تفصیلی فیصلہ جاری نہیں کیا جاتا تو بتایا جائے کہ مزید کتنا وقت درکار ہوگا۔

مزیدخبریں