پولیس میں سیاسی مداخلت ختم کریں گے: آئی جی پنجاب

Sep 12, 2018

لاہور (نامہ نگار) انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب محمد طاہر نے کہا ہے کہ پنجاب پولیس کو درپیش چیلنجز سے نبرد آزما ہونے کیلئے میرٹ سسٹم کی پاسداری کو شعار بنایا جائے گا اور فورس کی بہترین ویلفیئر کے ساتھ ساتھ سزا و جزا کے عمل کو خصوصی اہمیت دی جائے گی۔ فی الحال پنجاب پولیس کی تمام تر توجہ صوبے میں محر م الحرام کے دوران امن و امان کی فضابرقرار رکھنے پر مرکوز ہے اور افسران کی صوبہ بدری یا تقرر و تبادلوں کے حوالے سے کوئی پروگرام زیر غور نہیں تاہم انتظامی امور میں بہتری اور عوام کی سہولت کیلئے پولیس نظام میں جہاں بہتری کی گنجائش نظر آئی وہاں محرم کے بعد ضروری تبادلے کیے جا سکتے ہیں اس پر بلا تاخیر عمل در آمد کیا جائے گا ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سنٹرل پولیس آفس میں آئی جی پنجاب کا چارج سنبھالنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ محمد طاہر نے کہا تھانہ کلچر میں تبدیلی کے لئے کے پی پولیس کی طرز پر ڈی آر سی سمیت دیگر اقدامات شروع کرنے پر غور کیا جائے گا۔ پولیس میں بڑی خرابی سیاسی بھرتیاں اور تعیناتیاں ہیں۔ میری اولین کوشش ہے کہ سیاسی مداخلت کو ختم کیا جائے۔ صوبے میں محرم الحرام کے دوران مجالس اور جلوسوں کی فول پروف سیکیورٹی کیلئے وضع کردہ ایس او پیز کے مطابق سکیورٹی کے ہر ممکن اقدامات کئے جائیں گے۔ دریں اثناء سابق آئی جی پنجاب ڈاکٹرسید کلیم امام نے سنٹرل پولیس آفس کے کمیٹی روم میں سینئر پولیس افسران کے ساتھ الوداعی ملاقات کی اور پنجاب پولیس کی سربراہی کے فرائض نئے آئی جی پنجاب محمد طاہر کے سپرد کئے۔

مزیدخبریں