”کاغذات نامزدگی فارم میں ترامیم“ حکومت کی تاخیر کیخلاف ہائیکورٹ میں رٹ

12 مارچ 2013
”کاغذات نامزدگی فارم میں ترامیم“ حکومت کی تاخیر کیخلاف ہائیکورٹ میں رٹ

لاہور (وقائع نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ میں کاغذات نامزدگی فارم میں ترامیم کی منظوری میں حکومتی تاخیر کو چیلنچ کر دیا گیا ہے۔ طارق احمد کی طرف سے دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ الیکشن کمشن نے کاغذات نامزدگی میں بعض ترامیم منظوری کے لئے وزارت قانون کو بجھوا دی ہیں ان ترامیم میں امیدواروں کے حوالے سے آئین کے آرٹیکلز 62,63 پر عمل درآمد کو یقینی بنایا گیا ہے تاکہ جعلی ڈگری، دوہری شہریت، بنک نادہندہ اور نااہلی کی زد میں آنے والا کوئی امیدوار انتخابات میں حصہ نہ لے سکے، حکومت اس کی منظوری میں تاخیری حربے استعمال کر رہی ہے۔ اسکے علاوہ ترامیم کی منظوری کے لئے صدر کا اختیار غیرآئینی ہے، لہٰذا عدالت سے استدعا ہے کہ وہ اس امر کا نوٹس لے اور حکومت کے تاخیری حربوں کا بھی نوٹس لے۔ 

آئین سے زیادتی

چلو ایک دن آئین سے سنگین زیادتی کے ملزم کو بھی چار بار نہیں تو ایک بار سزائے ...