ڈاکٹر قدیر کی دعوت پر اے پی سی میں 13 سیاسی جماعتوں کی شرکت

12 مارچ 2013
ڈاکٹر قدیر کی دعوت پر اے پی سی میں 13 سیاسی جماعتوں کی شرکت

اسلام آباد (اے پی پی ) ملک کی مجموعی صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے ڈاکٹر عبدالقدیر خان چیئرمین تحریک تحفظ پاکستان کی دعوت پر 13 جماعتوں پر مشتمل اے پی سی میں جماعت اسلامی، جمعیت علمائے اسلام (س)، جمعیت علمائے اسلام نظریاتی، جمعیت علمائے پاکستان (نورانی)، جمہوری وطن پارٹی، تحریک صوبہ ہزارہ، کسان اتحاد، تنظیم الاخوان، مزدور کسان پارٹی، تحریک خاکسار، جمعیت علمائے پاکستان (سواد اعظم)، جمعیت اہلحدیث کے نمائندوں نے شرکت کی ۔ شرکا کانفرنس نے اس بات پر اتفاق کیا کہ کلمہ طیبہ پر حاصل کئے جانے والے ملک میں جب تک قرآن و سنت کو دستور نہیں بنایا جائے گا اس وقت تک کسی قسم کے امن اور استحکام کا سوچنا بھی عبث ہے۔ کانفرنس کے شرکا نے اس بات کا عزم کیا کہ آئندہ سیاسی عمل میں ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کرینگے۔ لیاقت بلوچ کی رائے پر سب نے اتفاق کیا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی قیادت میں تمام جماعتوں کے سربراہان یا نمائندوں پر مشتمل ایک ورکنگ کمیٹی بنا لیں۔ اس کمیٹی کا پہلا اجلاس تین دن کے اندر بلانے کا فیصلہ بھی کیا گیا۔ اس کمیٹی کے تحت انتخابات اور اس کے بعد کے تمام سیاسی امور کو باہمی مشاورت سے چلانے کا فیصلہ کیا گیا۔ ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے اپنے صدارتی خطاب میں کہا کہ ملک کو مشکلات سے نکالنے کیلئے سب کو ملکر کام کرنا ہو گا، آئندہ انتخابات مختلف جماعتوں کے ساتھ ملکر حصہ لیا جائے گا اور پاکستان کو ترقی یافتہ بنانے کیلئے ہمیشہ اپنا کردار ادا کرتا رہوں گا۔