وفات پا جانے والے ملازمین کے خاندان کیلئے امدادی پیکیج پر نظرثانی

Jun 12, 2018

اسلام آباد (مسعود ماجد سید؍خبر نگار) اسٹیبلشمنٹ ڈویژن نے نگراں وزیراعظم کی منظوری سے وفاقی حکومت کے حاضر سروس وفات پاجانے والے سرکاری ملازمین کے خاندانوں کیلئے وزیراعظم کے امدادی پیکیج پر پھر نظرثانی کردی ہے اور مراسلے میں واضح کر دیا گیا ہے کہ 15جون 2013 سے 9فروری 2015کے درمیان کے دائر کردہ کلیمز اور جاری 20 اکتوبر 2014کے کلیمز پر حکومت نے کام شروع کردیاہے اور پیکیج کے تحت مقررہ حقوق اور قوانین کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے کیسز کو نمٹایا جائے گا۔ اس سلسلے میں تمام وزارتوں و ڈویژنوں کو آگاہ کردیا گیا ہے کہ وہ اپنے اپنے متعلقہ فنانشل ایڈوائزرز کے ذریعے کیسز فائل کریں گے۔ وزارت خزانہ کو یہ کیسز بھیجے جائیںگے اور معاوضوں کی ادائیگی ضمنی گرانٹ کے ذریعے کی جائیگی۔ واضح ہو کہ اس سلسلے میں ’’نوائے وقت‘‘ نے سب سے پہلے21مئی 2018کو اس نظرثانی شدہ پیکیج کی منظوری کی خبر دی تھی اور اب اسی پیکیج پر مزید نگراں وزیر اعظم نے نظرثانی کرتے ہوئے ہدایات جاری کردی ہیں۔ اب وفات پاجانے والے سرکاری ملازمین کے خاندان کے افراد کو درجہ چہارم کی اسامیوں سے بڑھ کر گریڈ پندرہ تک کی اسامیوں پر بغیر اشتہار بھرتی بھی کیا جا سکے گا اور خاندان کو معاوضہ بھی ادا کیا جائیگا۔

مزیدخبریں